پلڈاٹ سروے میں پنجاب کے طرز حکمرانی کی تحسین

27 اکتوبر 2016
پلڈاٹ سروے میں پنجاب کے طرز حکمرانی کی تحسین

پنجاب نے طرز حکمرانی میں چاروں صوبوں پر سبقت لے لی۔ خیبر پی کے کا دوسرا نمبر۔ پلڈاٹ سروے۔
ملک میں جمہوریت اور شفافیت سے متعلق غیر سرکاری ادارے پلڈاٹ کے ملک گیر عوامی سروے کے مطابق عوام کی اکثریت یعنی 54 فیصد نے ملک بھر میں معیار جمہوریت کے حوالے سے اپنی مثبت رائے کے ساتھ جمہوریت پر اپنے اعتماد کا اظہار کیا اور پنجاب کو طرز حکمرانی میں دوسرے صوبوں پر سبقت ملی ہے۔ سروے کے مطابق سال 2016ء کا سب سے بڑا مسئلہ دہشت گردی قرار پایا جبکہ مہنگائی اور توانائی بحران بڑے مسائل میں شامل ہیں۔ معیار جمہوریت کے جائزے سے متعلق عوامی سروے کے مطابق وفاقی حکومت نے طرز حکمرانی کے 27 اشاریوں میں سے فقط 10 اپرول ریٹنگ حاصل کی تاہم عوام کی طرف سے وزیراعظم کی مجموعی کارکردگی کو تسلی بخش قرار دیکر اس پر اظہار اطمینان سامنے آیا۔ پنجاب نے ملک گیر سروے میں سب سے زیادہ 67 فیصد اپرول ریٹنگ حاصل کر کے چاروں صوبوں پر سبقت حاصل کی جبکہ خیبر پی کے 38 فیصد اپرول ریٹنگ کے ساتھ دوسرے نمبر اور بلوچستان 26 فیصد اپرول ریٹنگ کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہا۔ سندھ کی اپرول ریٹنگ سب سے کم 18 فیصد رہی۔ وزیر اعلیٰ پنجاب میاں محمد شہباز شریف نے پنجاب میں طرز حکمرانی بہتر بنانے کا سلسلہ شروع کر رکھا ہے یہ اسی ان تھک جدوجہد اور شبانہ روز محنت کا نتیجہ ہے کہ آج پنجاب اپنے ترقیاتی منصوبوں کے حوالے سے بھی باقی صوبوں سے الگ اور ممتاز نظر آتا ہے۔ اسے بجا طور پر قابل تقلید اور مثالی قرار دیا جا سکتا ہے۔