خانہ بدوش کینیڈی

27 اکتوبر 2016

مکرمی! عمران خان ابھی تک 2نومبر کو دھرنے کی ضد پر اڑے ہوئے ہیں۔ سانحہ کوئٹہ کا ان پر کوئی اثر نہیں۔ نا صرف وہ خود بلکہ انہوں نے مولانا طاہر القادری کو بھی فون پر دھرنے میں شرکت کی دعوت دی ہے جو انہوں نے قبول کی۔ گزشتہ چند برس پہلے بھی عمران اور قادری نے ملکر اسلام آباد میں دھرنا دیئے رکھا جو کہ بغیر کسی نتائج کے بے سودثابت ہوا۔ اب ایک مرتبہ پھر دونوں نے اسلام آباد بند کرنے کا عزم کیا ہوا ہے۔ کسی کینیڈین شہری کو کسی صورت یہ حق حاصل نہیں کہ وہ زیادہ عرصہ تو کینیڈا میں مقیم رہے اور جب کسی کو ملکی افراتفری بپا کرنی ہو تو اس کی دعوت پر آکر چند دن گزار کر چلا جائے بھلا ایک کینیڈا میں مقیم شخص کو پاکستان کے مفادات سے کیا غرض۔ حکومت سے التماس ہے کہ کسی غیرملکی شہری کو اسلام آباد بند کرنے کی اجازت ہر گز نہ دی جائے۔ (عشرت جمیل دیوکلاں ۔لاہور)