' آر پی او ،سی پی اوسے نوٹس لینے کا مطالبہ

27 اکتوبر 2016
' آر پی او ،سی پی اوسے نوٹس لینے کا مطالبہ

مکرمی، مصریال چوک تا ڈھوک سیداں اور اس سے ملحقہ علاقوں میں ناجائز فروشی عرصہ دراز سے ہو رہی ہے۔منشیات فروش نوجوان نسل کو برباد کر رہے ہیں۔متعدد بار اہل علاقہ نے کارروائی کیلئے متعلقہ تھانوں میں درخواستیں دیں مگرعملہ کی طرف سے کوئی کارروائی عمل میں نہ لائی گئی ناجائز فروش ان علاقوں میںمنتھلیاں ادا کر کے پولیس کی سرپرستی میں سرعام منشیات فروش کرتے ہیںبعض اوقات تو یہ بھی دیکھنے میں آیا ہے کہ اپنی جان چھڑانے کیلئے اور پولیس اہلکاروںکی جیب موٹی کرنے کیلئے نشہ فروش کرنے والے منشیات کے عادی افراد کو فراہمی کے بعد پولیس کو ان کے پیچھے بھیج دیتے ہیں اور وہ ان سے مال بٹورنے کے ساتھ ساتھ ان پر تشدد بھی کرتے ہیں مگر فروخت کنندہ پر کوئی آنچ نہیں آتی جبکہ متعلقہ تھانوں کے علاوہ اردگرد کے تھانے بھی مال بنانے کیلئے نشہ کرنے والوں کو پکڑ کر لے جاتے ہیں اور ان کے اقربا سے مال بٹورتے ہیں اور اگر عوامی مسئلہ کے حل کیلئے ان کو کہا جائے تو کہا جاتا ہے کہ یہ ہمارا علاقہ نہیں علاقے کے متعلقہ تھانے سے رابطہ کریں۔سوال یہ ہے کہ منشیات فروشی بڑاجرم ہے یا نشہ کرنا؟ ہم آر پی او اور سی پی او سے اپیل کرتے ہیں کہ ان علاقوں سے ناجائز فروشوں کا صفایا کرایا جائے تا کہ نوجوان نسل بے راہ روی کا شکار نہ ہو اور اہل علاقہ سکھ کا سانس لیںاور پولیس اہلکاروںکی اصلاح کی جائے ۔
(اے آر پی و دیگراہل علاقہ برف خانہ چوک راولپنڈی)