وزیراعلیٰ کی خدمت میں

27 فروری 2010
مکرمی!ایل ڈی اے کی منظور شدہ جوہر ٹاﺅن سکیم کے Eبلاک سے ایک 90فٹ ڈبل سڑک ای ون اور ای ٹو بلاک سے گزرتی ہوئی ڈاکٹرز ہسپتال کے پاس لاہور نہر تک جاتی ہے۔ یہ سڑک ایسے ہی جوہر ٹاﺅن کے منظور شدہ ماسٹر پلان میں موجود ہے۔ تاحال PTCLنے اس ڈبل سڑک کی دونوں سائیڈوں پر واقع اراضی کی ملکیت کا دعویٰ کرتے ہوئے قبضہ کر رکھا ہے اور اطراف میں دیواریں کھڑی کی ہوئی ہیں اور مین سڑک بند کر رکھی ہے مین سڑک بند ہونے کی وجہ سے ان دو مقبوضہ ٹکڑوں کا درمیانی علاقہ مقامی غنڈوں اور قبضہ گروپ کی آماجگاہ بنا ہوا ہے۔ وہ لوگ جنہوں نے ایل ڈی اے کی اس سکیم میں اربوں روپے کی سرمایہ کاری کی ہوئی ہے گذشتہ بیس سالوں سے ان دو محکموں کے ذمہ دار افسران پر خدا کا قہر اور غضب نازل ہونے کا انتظار کر رہے ہیں۔ آخر عوام کے خون پسینے کی کمائی پر پلنے والے ان اداروں کے افسران عوام کی فلاح کے لئے باہمی میٹنگ کے ذریعے جلد فیصلہ کر کے اس مسئلہ کا حل کیوں نہیں نکال سکتے ہیں۔
(پنجاب بورڈ آف ریونیو ہاﺅسنگ سوسائٹی جوہر ٹاﺅن لاہور)