بھارت: حکمران اتحاد میں شامل جماعتوں نے پاکستان سے جنگ یا محدود حملوں کی مخالفت کر دی

27 دسمبر 2008
پیرس(ریڈیو نیوز) بھارت میں حکمران اتحاد میں شامل جماعتوں نے پاکستان سے جنگ یا محدود حملوں کی مخالفت کر دی ہے جس کے باعث انڈین نیشنل کانگریس(آئی این سی) کا24 جماعتوں پر مشتمل حکومتی اتحاد یونائیٹڈ پروگریسو الائنس(یو پی اے) شدید خطرات سے دو چار ہوگیا ہے اور چھ اہم جماعتوں نے مذاکرات کے ذریعے معاملات حل نہ کرنے کی صورت میں حکومت سے علیحدگی اور بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کا ساتھ دینے کی دھمکی دے دی ہے جس سے آئندہ انتخابات میں کانگریس کو شدید دھچکا لگ سکتا ہے۔ جمعہ کو حکمران جماعت کے چند اراکین نے ذرائع ابلاغ کو بتایا کہ یہ بات درست ہے کہ بھارتی ایوان زیریں، لوک سبھا میں برسراقتدار انڈین نیشنل کانگریس کے بنائے گئے اتحاد یونائیٹڈ پروگریسو الائنس میں شامل چھ اہم جماعتوں ڈراویڈا منترا کازاگام(ڈی ایم کے) نیشنلسٹ کانگریس پارٹی(این سی پی) راشٹریا جنتا دل(آر جے ڈی) باہو جن سماج پارٹی(بی ایس پی) سماج وادی پارٹی(ایس پی) اور بائیں بازو کی جماعمت کمیونسٹ پارٹی آف انڈیا(مارکسسٹ) جیسی بڑی اکثریتی جماعتوں اور پانچ آزاد اراکین نے اندرونی اختلاف کے بعد اب پاکستان پر حملے کی کھل کر شدید مخالفت شروع کر دی ہے اور ممبئی حملوں کی تحقیقات سمیت تمام تر معاملات کو مذاکرات کے ذریعے حل کرنے پر زور دیا ہے ۔