پاک فوج کی موجودگی میں بھارت میلی آنکھ سے دیکھنے کی جرات نہیں کر سکتا: مشرف

27 دسمبر 2008
پاک فوج کی موجودگی میں بھارت میلی آنکھ سے دیکھنے کی جرات نہیں کر سکتا: مشرف
لاہور( خبر نگارخصوصی/ مانیٹرنگ نیوز) سابق صدر پرویز مشرف نے کہا ہے کہ پاکستان کی مسلح افواج کی موجودگی میں بھارت پاکستان کی جانب میلی آنکھ کے ساتھ دیکھنے کی جرأت بھی نہیں کر سکتا ‘ ملک محفوظ ہاتھوں میں ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے سابق وزیر خارجہ خورشید محمود قصور ی کے بیٹے اور میاں منظور وٹو کی صاحبزادی کی دعوت ولیمہ میں اخبار نویسوں سے گفتگو میں کیا۔ انہوں نے کہا کہ دہشت گردی صرف پاکستان، بھارت یا افغانستان کا مسئلہ نہیں بلکہ یہ پوری دنیا خود امریکہ، برطانیہ جیسے ترقی یافتہ ممالک کا بھی مسئلہ ہے ۔ دہشت گردی کے خلاف پاکستان نے ہمیشہ فرنٹ لائن پر رہتے ہوئے کردار ادا کیا ہے اور کر رہا ہے۔ لٰہذابھارتی حکمرانوں کی جانب سے ممبئی واقعات پر پاکستان کو بغیر کسی ثبوت کے مورد الزام ٹھہرانا اور حقائق کے برعکس اقدامات کرکے جنوبی ایشیا کے امن کو تباہ کرنے کے لئے اقدامات کرنا غلط ہے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان کی مسلح افواج کا شماردنیا کی بہترین افواج میں ہوتا ہے اور وہ ملکی دفاع کے حوالے سے اپنا کام بخوبی جانتی ہیں۔ ثنا نیوز کے مطابق پرویز مشرف نے مزید کہا ہے کہ پاکستان اور بھارت کے درمیان بہتری کا جو سفر شروع ہوا تھا اسے جاری رہنا چاہئے۔