پاکستان کی معاشی صورتحال ابھی تک نازک ہے: آئی ایم ایف

27 اگست 2009
کراچی (رائٹرز) عالمی مالیاتی فنڈ نے کہا ہے کہ پاکستان کی معاشی صورتحال ابھی تک نازک ہے اور معیشت کو مختلف چیلنجز کا سامنا ہے۔ آئی ایم ایف نے اپنی جائزہ رپورٹ میں کہا ہے کہ پاکستانی معیشت درمیانی مدت تک اہم خطرات سے دوچار ہو سکتی ہے۔ فنڈ کے مطابق عالمی معیشت میں سست ریکوری‘ اجناس کی بلند قیمتیں اور سیاسی عدم استحکام کے علاوہ توانائی اور خراب بنیادی ڈھانچے کی وجہ سے پاکستانی معیشت کو مشکلات درپیش ہیں تاہم اہم میکرو اعشاریوں میں بہتری آرہی ہے اس کے باوجود معیشت میں جھٹکے آسکتے ہیں۔ آئی ایم ایف کے مطابق افراد زر میں گزشتہ مالی سال کے دوران نمایاں کمی ہوئی لیکن یہ کمی توقع سے کم ہے۔ فنڈ نے سٹیٹ بنک کی جانب سے شرح سود میں ایک فیصد کمی کی مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ افراط زر میں مزید کمی تک شرح سود کم نہ کی جائے۔ عالمی مالیاتی فنڈ نے کہا ہے کہ رواں مالی سال پاکستانی معیشت تین فیصد کی شرح سے ترقی کرے گی جبکہ اس کا ہدف 3.3 فیصد ہے۔
آئی ایم ایف