سستے آٹے کی تقسیم کے دوران پیر مظہر الحق نے کئی شہریوں کو تھپڑ مار دئیے

27 اگست 2009
دادو (نیٹ نیوز) سستے آٹے کی تقسیم کے دوران گھنٹوں انتظار کرنے والے غریب شہری صوبائی وزیر پیر مظہر الحق کے تھپڑوں کا نشانہ بن گئے۔ گذشتہ روز صوبائی وزیر پیر مظہر الحق کی نگرانی میں آٰٹے کی تقسیم کی گئی‘ رش زیادہ ہونے کے باعث تقسیم بدنظمی کا شکار ہو گئی۔ اس دوران صوبائی وزیر نے شہریوں کو قطار میں رہنے کی ہدایت کی اور کئی افراد کو تھپڑ رسید کر دئیے ۔ شہریوں نے احتجاج کرتے ہوئے کہا کہ آٹے کی قلت حکومت کی پالیسیوں کا نتیجہ ہے مگر حکومتی نمائندے عوام کی مدد کے بجائے انہیں تھپڑ مار رہے ہیں جو سراسر ناانصافی ہے۔ انہوں نے پیر مظہر الحق کے خلاف نعرے بازی کرتے ہوئے کہا کہ حکومت ایسے اعلانات نہ کرے جو غریب شہریوں کی تذلیل کا باعث ہوں۔