آر ایس ایس کی غنڈہ گردی، نئی دہلی کی دیواروں پر اردو اشعار کی پینٹگز مٹوا دیں

26 مئی 2016

نئی دہلی (بی بی سی) بھارتی دارالحکومت نئی دہلی میں ایک دیوار پر اردو رسم خط میں کی جانے والی پینٹنگ آر ایس ایس کے کارکنوں نے زبردستی مٹاکر مودی کی صفائی مہم سواچ بھارت کے نعرے لکھ دئیے۔ تفصیلات کے مطابق انتہا پسند ہندو تنظیم کے لوگوں نے دیوار پر اردو اشعار لکھنے والے دو فنکاروں کو ان کی پینٹنگز انہی سے مٹوانے اور وہاں ’سوچھ‘ یعنی صاف ستھرا بھارت مہم کا نعرہ لکھنے پر مجبور کیا۔ اس حوالے سے دہلی کے وزیر ثقافت کپل مشرا نے بی بی سی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا: ’میں خود وہاں جاؤں گا، اردو میں پینٹنگ کرواؤں گا۔ دیکھتے ہیں کون روکنے آتا ہے۔ انہوں نے کہا دہلی نے بی جے پی اور آر ایس ایس کے کٹر نظریات کو مسترد کردیا ہے اور اسی لیے یہ لوگ بوکھلائے ہوئے ہیں۔‘ واضح رہے کہ گذشتہ ہفتے 19 مئی کو دہلی حکومت کی اجازت سے سرکاری عمارتوں کی دیواروں پر ایک غیر ملکی اور ایک ہندوستانی فنکار نے اردو اشعار کو پینٹنگز کی شکل میں پیش کرنے کا کام شروع کیا تھا۔ ان فنکاروں نے بتایا ہے کہ آر ایس ایس کے غنڈوں نے نہ صرف ان کی پینٹنگز ان سے مٹوائیں بلکہ انہیں ہندی رسم خط میں اس پر ’سواچ بھارت مہم‘ لکھنے پر مجبور کیا۔ وزیر کپل مشرا نے کہا: ’میں اردو پینٹنگ کے ساتھ دیوار پر وہ پوسٹر بھی لگواؤں گا جو نریندر مودی نے اردو میں ٹویٹ کیا تھا۔‘ انہوں نے کہا: ’مودی اردو لکھیں تو ٹھیک اور دوسرے لوگ لکھیں تو مخالفت، یہ کون سی ثقافت ہے جو یہ لوگ دہلی میں لانا چاہتے ہیں؟‘ مشرا نے مزید کہا: ’اردو ایسی زبان ہے جو دہلی میں پیدا ہوئی اور پھر دنیا بھر میں پھیلی۔ یہ لوگ جو ہندو مذہب کی حفاظت کی بات کر رہے ہیں انہیں ہندو مذہب کا علم ہی نہیں۔
نئی دہلی/ دیواریں