ڈرون حملہ حکومتی ناکامی ہے‘ ٹی او آر میں قرض معافی کے معاملے کی شمولیت قبول نہیں: عمران

26 مئی 2016
ڈرون حملہ حکومتی ناکامی ہے‘ ٹی او آر میں قرض معافی کے معاملے کی شمولیت قبول نہیں: عمران

بٹگرام (آئی این پی+دی نیشن رپورٹ) تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ ڈرون حملے پاکستان کی خودمختاری کے خلاف ہیں‘ مارتا امریکہ ہے طالبان بدلہ پاکستان سے لیتے ہیں‘ ہم دونوں طرف سے پس رہے ہیں۔ نواز شریف اپوزیشن میں تھے تو ڈرون حملوں پر بڑھکیں مارتے تھے اب کچھ نہیں بولتے‘ نوشکی میں ڈرون حملہ نواز شریف حکومت کی ناکامی ہے‘ نواز شریف کے رویئے سے لگتا ہے کہ وہ اقتدار میں رہنے کے لئے کچھ بھی کرسکتے ہیں۔ وہ بٹگرام کے علاقے شملائی میں تین ہائیڈرو پاور پراجیکٹس کے افتتاح کے بعد میڈیا سے گفتگو اور تقریب سے خطاب کررہے تھے۔ چیئرمین پی ٹی آئی نے بیلا بالا کے مقام پر دو سو کلو واٹ‘ شگئی میں 75 اور بیساکھیت کے مقام پر 30کلو واٹ ہائیڈرو منصوبے کا افتتاح کیا۔ تینوں ہائیڈرو پاور پراجیکٹس پر تین کروڑ پچاسی لاکھ روپے لاگت آئی۔ ان منصوبوں سے مجموعی طور پر ایک سو پانچ کلو واٹ بجلی پیدا ہوگی۔ عمران نے کہا کہ مائیکرو پلانٹ سے دو سو گھروں کو بجلی ملے گی بجلی چوبیس گھنٹے دستیاب ہو گی لوڈشیڈنگ نہیں کی جائے گی۔ مقامی آبادی خود بجلی کی قیمت مقرر کرے گی اور بل وصول کرے گی۔ عمران نے کہا کہ پانامہ لیکس میں آنے والے آٹھ سربراہوں کے نام میں نواز شریف کا نام بھی شامل ہے۔ شریف فیملی کے سارے لوگ مختلف بیانات دے رہے ہیں اگر لندن فلیٹس قانونی ہوتے تو شریف فیملی اب تک بتا چکی ہوتی۔ عمران خان نے نوشکی ڈرون حملے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ امریکی ڈرون حملے پاکستان کی خودمختاری اور سالمیت کے خلاف ہیں۔ امریکہ بتائے کہ کیا وہ ڈرون حملے کرکے جنگ جیت لے گا۔ بعد ازاں عمران نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ایک سال میں تین سو پچاس مائیکرو ہائیڈرل پراجیکٹس لگانے کا منصوبہ ہے ایسا بلدیاتی نظام لائیں گے کہ مقامی لوگ اپنا نظام خود چلائیں۔ میاں صاحب بار بار پوچھتے تھے کہ نیا خیبر پی کے کہاں ہے تو یہاں آکر دیکھ لیں۔ انہوں نے کہا کہ پانامہ لیکس کے بعد وزیراعظم نے ایک ہزار ارب روپے کے منصوبوں کا اعلان کیا ان کو پہلے کیوں یہ منصوبے یاد نہیں آئے۔ چین سمیت ساری دنیا میں کوئلے کے پاور سٹیشنز بند کئے جارہے ہیں یہاں شریف برادران کوئلے سے بجلی پیدا کرنے کے منصوبے بنا رہے ہیں۔ کرپٹ حکمرانوں نے ملک وقوم کو اپنے غیر ملکی آقائوں کی غلامی میں جکڑنے کی منصوبہ بندی کررکھی ہے ان سے جلد چھٹکارا نہ پایا تو ملک وقوم کا مستقبل تاریکی میں ڈوب جائے گا ہم ملک سے کرپشن کے ناسور کے مکمل خاتمے کے لئے جدوجہد کررہے ہیں، نوازشریف کو پانامہ لیکس کی تحقیقات مکمل ہونے تک وزیراعظم کا عہدہ چھوڑ دینا چاہئے تاکہ شفاف اور منصفانہ تحقیقات ہو سکیں۔ عمران نے کہا کہ آئندہ عام انتخابات میں پی ٹی آئی بھرپور تیاری سے میدان میں آئیگی اور الیکشن میں ملک گیر کامیابی حاصل کرے گی۔ دریں اثنا ایک بیان میں عمران خان نے کہا ہے کہ حکومت قرضے معاف کرانے والوں کے متعلق عدالتی کمشن کی رپورٹ شائع کرکے ان کے خلاف قانونی کارروائی کرے۔ عمران خان نے خیبر پی کے میں ایک نیا شہر بسانے کا اعلان کردیا۔ ٹوئیٹر پر اپنی ٹوئیٹس میں عمران خان نے لکھاکہ بٹگرام سے واپسی پر دیکھا کہ تقریباً 9000فٹ کی بلندی پر سیاحوں کیلئے ایک ہل سٹیشن بن سکتا ہے جہاں پانی بھی موجود ہے، خیبر پی کے کابینہ سے بات کروں گا کہ نئے ہل سٹیشن کو ماحول دوست سیاحت کو فروغ دینے کے لیے نتھیا گلی کی طرز پر کیسے ڈویلپ کیا جاسکتا ہے۔دی نیشن کے مطابق عمران خان نے کہا کہ پانامہ لیکس کمشن کے ذریعے بنائے جانے والے ٹی او آرز میں قرض معافی سے متعلق پوائنٹس شامل کرنا کسی صورت قبول نہیں کرینگے۔ انکا کہنا تھا کہ حکومت اس کیلئے کوشش کررہی ہے تاہم یہ معاملہ پہلے سے طے ہوچکا ہے۔

آئین سے زیادتی

چلو ایک دن آئین سے سنگین زیادتی کے ملزم کو بھی چار بار نہیں تو ایک بار سزائے ...