پاکستان میں شفاف پیداواری عمل سے پیسے اور توانائی کی بچت ممکن ہے: آئی ایف سی

26 مئی 2016

اسلام آباد (کامرس رپورٹر) پاکستان کی صنعتوں میں توانائی‘ پانی اور خام مال کے استعمال میں کمی سے نہ صرف پیداواری عمل میں اضافہ کیا جا سکتا ہے‘ بلکہ توانائی کے بحران اور قدرتی وسائل کے غیر ضروری استعمال پر بھی قابو پایا جا سکتا ہے۔ یہ بات ورلڈ بنک گروپ کے رکن انٹر نیشنل فنانس کارپوریشن (آئی ایف سی) کی فنڈ کردہ ایک نئی سٹڈی میں بتائی گئی ہے۔ نیشنل پراڈکیٹویٹی آرگنائزیشن اور کلینر پروڈکشن انسٹی ٹیوٹ کی تیار کردہ رپورٹ میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ پاکستان میں بعض صنعتیں توانائی بچت کی حامل جدید ٹیکنالوجی کے استعمال سے بجلی کی 20 فیصد تک بچت کرکے اربوں روپے بچا سکتی ہیں۔