آٹھویں کی کتاب میں 6 صوبے، ذمہ داروں کیخلاف کارروائی نہ کرنے پر پولیس کو دوبارہ نوٹس

26 جولائی 2015

لاہور (اپنے نامہ نگار سے) لاہور کی سیشن عدالت نے پنجاب ٹیکسٹ بک بورڈ کی جانب سے آٹھویں جماعت کے نصاب میں پاکستان کے چھ صوبے ظاہر کرنے پر وزیراعلیٰ پنجاب، سیکرٹری سکولز عبدالجبار شاہین، پنجاب ٹیکسٹ بک بورڈ کے چئیرمین سمیت اٹھارہ افراد کے خلاف کارروائی کرنے کے لئے دائر درخواست پر تھانہ سول لائنز پولیس کو دوبارہ نوٹس جاری کرتے ہوئے 30 جولائی کو جواب طلب کر لیا۔ ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج کے روبرو درخواست گزاروں کے وکیل نے بتایا سرائیکستان اور ہزارہ کو صوبہ ظاہر کرنا چھوٹے بچوں کے ذہنوں کو پاکستان کی غلط تاریخ بیان کرنے کے مترادف اور آئین کے آرٹیکل ایک اور دو کی نفی ہے۔