کامرہ ایئربیس حملےکی تحقیقات میں اہم پیش رفت ہوئی ہے

25 ستمبر 2012 (19:52)

ذرائع کےمطابق کامرہ ایئر بیس حملے میں مارے جانے وانے دہشت گرد فیصل شہزاد کی دو قریبی عزیزوں جن کے نام اللہ دتہ اور بابربتائے گئے ہیں کو ٹیکسلا اور راولپنڈی سےحراست میں لیا گیا ہے اور ان سے تحقیقات کی جارہی ہیں۔حراست میں لئے گئے دونوں افراد میں سے ایک
امپورٹ ایکسپورٹ کاکام کرتا ہے جبکہ دوسرا ایک سیاسی جماعت کا رکن ہے ۔ذرائع کے مطابق حملے میں مارے جانے والے دہشت گرد فیصل شہزاد کے اکاؤنٹ میں نو کروڑ روپے کی موجودگی کا انکشاف بھی ہوا ہے ۔ فیصل شہزاد کامرہ میں ایک فیکٹری کا سابق ملازم تھا اور اس سے قبل بھی دہشت گردی کے ایک مقدمے میں بری ہو چکا تھا۔ذرائع کے مطابق حراست میں لئے گئے دونوں افراد سے اہم انکشافات متوقع ہیں۔