لیبیا کے ایٹمی پروگرام میں ملوث سوئس انجینئرز مزید سزا سے بچ گئے

25 ستمبر 2012

جنیوا (اے ایف پی) لیبیا کے غیرقانونی ایٹمی ہتھیاروں کے پروگرام میں مدد کرنے والا سوئس انجینئرز کا خاندان مزید جیل کی سزا سے بچ جائے گا کیونکہ پراسیکیوٹر نے کم سزا کی استدعا کی ہے اور کہا ہے کہ وہ ایک عرصہ سزا کا گزار چکے ہیں، اس کیس کا آغاز 1990ءکی دہائی میں اس وقت ہوا جب انجینئرز کی اس فیملی نے ڈاکٹر قدیر کے ساتھ مل کر کام شروع کیا۔ پلی بارگین کے باعث انہیں رہائی مل جائے گی۔