کراچی: فائرنگ اور تشدد کے واقعات میں 4 بھائیوں سمیت مزید 9 افراد ہلاک

25 ستمبر 2012

کراچی (وقت نیوز+ نوائے وقت رپورٹ+ وقائع نگار+ ایجنسیاں) کراچی میں فائرنگ اور تشدد کے واقعات میں 4سگے بھائیوں سمیت مزید 9افراد ہلاک اور 5زخمی ہو گئے۔ کراچی کے علاقے ڈسکو موڑ پر نامعلوم افراد نے ایک گاڑی پر فائرنگ کر دی جس میں سوار چار بھائی دم توڑ گئے۔ ترجمان اہلسنت و الجماعت کے ترجمان نے کہا ہے کہ فائرنگ سے جاں بحق ہونے والے چاروں بھائی تھے اور ہمارے کارکن تھے۔ کراچی بار کے سابق جوائنٹ سیکرٹری فرحت حسین نقوی کی گاڑی پر نامعلوم افراد کی فائرنگ سے ان کے بہنوئی زخمی ہوگئے جبکہ فرحت نقوی محفوظ رہے۔ کراچی بار کے صدر محمود الحسن کے مطابق گاڑی پر گارڈن کے علاقے میں نامعلوم افراد نے اس وقت فائرنگ کی جب وہ اپنے گھر سے کورٹ جارہے تھے۔ محمود الحسن نے واقعہ کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ آج کے واقعہ کے خلاف کراچی بار ایسوسی ایشن کے تحت سٹی کورٹ عدالتوں کا بائیکاٹ کیا جائے گا۔ دوسری جانب بلوچ کالونی پل کے قریب مسلح ملزمان نے فائرنگ کرکے ایک شخص کو قتل کردیا۔ ملیر کے علاقے جعفر طیار سوسائٹی میں نامعلوم افراد کی فائرنگ سے 3 افراد زخمی ہوگئے۔ زخمیوں کو جناح ہسپتال منتقل کیا گیا، جہاں ایک شخص زخموں کی تاب نہ لا تے ہوئے دم توڑ گیا جبکہ مچھرکالونی کے علاقہ سے ا یک شخص کی نعش ملی ہے۔ مقتول کی شناخت صہیب رضا کے نام سے ہوئی جبکہ زخمیوں میں محسن رضا اور حسن رضا شامل ہیں۔ نارتھ کراچی سیکٹر 5 سی تھری میں مسلح ملزمان نے فائرنگ کرکے ایک شخص کوقتل کردیا۔