اسلام آباد ہائیکورٹ نے جنرل کیانی کی ملازمت میں توسیع کیخلاف درخواست خارج کر دی

25 ستمبر 2012

اسلام آباد (وقائع نگار) چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ اقبال حمید الرحمن نے آرمی چیف کی مدت ملازمت میں توسیع کے خلاف درخواست ناقابل سماعت قرار دیتے ہوئے خارج کر دی ۔ عدالت نے حکم میں کہا ہے کہ آئین کے آرٹیکل 199 کی سب سیکشن 3 کے تحت آرمی سروس کے معاملات کو ہائیکورٹ میں چیلنج نہیں کیا جا سکتا۔ درخواست گزار کرنل (ر) انعام الرحیم ایڈووکیٹ نے دلائل میں کہا کہ موجودہ آرمی چیف کیانی آرمی ایکٹ کے خلاف عہدے پر فائز ہیں کیونکہ 60 سال کی عمر کے بعد کوئی بھی فوجی یونیفارم میں نہیں رہ سکتا۔ جنرل کیانی کی مدت ملازمت میں توسیع سے کئی حاضر سروس لیفٹیننٹ جنرل ترقی کے حق سے محروم ہو گئے ہیں۔ مدت ملازمت میں توسیع کو غیر قانونی قراردیتے ہوئے کالعدم قرار دیا جائے۔