پنشنرز کی حالت زار

25 ستمبر 2012

مکرمی! پنجاب میں پنشنرز کی تعداد لاکھوں میں ہے جو سہولتوں سے محروم ہیں۔ پنشنرز کو سینئر سٹیزن کا نام تو دیا جاتا ہے مگر جائز حق نہیں دیا جاتا۔ اخباری بیانات میں ان پنشنرز کی فلاح و بہبود کیلئے بلند و بانگ دعوے کئے جاتے ہیں مگر ان پر عمل نہیں کیا جاتا۔ حال ہی میں سپریم کورٹ آف پاکستان نے فیصلہ دیا ہے کہ پنشنرز کا کمیوٹیڈ پوریشن ریٹائرمنٹ کے پندرہ سال بعد تمام اضافہ جات کے ساتھ بحال کیا جائے۔ اصولی طور پر وفاقی حکومت کو اس حکم پر من و عن عمل کرنا چاہئے تھا مگر انٹرکورٹ فائل کر کے معاملے کو مزید لٹکانے کی کوشش ک یگئی ہے جس سے ارباب اختیار کے قول و فعل میں تضاد واضح ہوتا ہے جس کی وجہ سے پنشنرز میں مایوسی بڑھتی جا رہی ہے۔ اس سے یہ بات بھی ثابت ہوتی ہے کہ وفاقی حکومت ان بزرگ پنشنرز کو کمیوٹیڈ پنشن کی تمام اضافہ جات کے ساتھ واپسی کے معاملے میں سنجیدہ نہیں ہے۔ وزیراعظم پاکستان سے درخواست ہے کہ وہ سپریم کورٹ کے مذکورہ بالا حکم کی روشنی میں فوری نوٹیفکیشن کے اجراءکے احکامات جاری فرمائیں۔ (عبدالحق، صدر پنجاب گورنمنٹ پنشنرز فرنٹ 0323-4340836)