نظریہ پاکستان ٹرسٹ کے تحت 50 لاکھ کا سامان زلزلہ متاثرین کے لئے بھجوا دیا

25 اکتوبر 2013

لاہور (خصوصی رپورٹر) بلوچستان میں آنیوالے بدترین زلزلہ کے بعد متاثرین کی بحالی کیلئے نظریہ¿ پاکستان ٹرسٹ کے قائم کردہ بلوچستان ریلیف فنڈ میںجمع شدہ عطیات و اشیا گذشتہ روز ایون کارکنان تحریک پاکستان، شاہراہ قائداعظمؒ لاہور سے ٹرکوں کے ذریعے کوئٹہ (بلوچستان) روانہ کر دی گئیں۔ اس موقع پر تحریک پاکستان کے سرگرم کارکن، ممتاز صحافی و چیئرمین نظریہ¿ پاکستان ٹرسٹ ڈاکٹر مجید نظامی، پروفیسر ڈاکٹر رفیق احمد، کرنل (ر) جمشید احمد ترین، میاں فاروق الطاف، پروفیسر ڈاکٹر پروین خان، مولانا محمد شفیع جوش، انجینئر محمد طفیل ملک اور شاہد رشید بھی موجود تھے۔ امدادی سامان کوئٹہ میں سید فصیح اقبال رینجرزکے حوالے کریں گے جو اسے زلزلہ متاثرین میں تقسیم کریں گے۔ امدادی سامان کی روانگی سے قبل گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹر مجید نظامی نے کہا ا بتلاءکے اس وقت میں پاکستانی قوم نے اپنے مصیبت زدہ بھائیوں کی امداد کیلئے دل کھول کر عطیات دئیے ہیں۔ بلوچستان کے عوام بھی ہمارے بھائی ہیں، مصیبت کے اس وقت میں ہم انہیں تنہا نہیں چھوڑیں گے اور ان کی ہرممکن مدد کریں گے۔ انہوں نے کہا یہ حکومت کی ذمہ داری ہے وہ بے گھر ہو جانیوالے افراد کو گھروں کی تعمیر میں مدد فراہم کرے۔ ڈاکٹر مجید نظامی نے بلوچستان ریلیف فنڈ میں عطیات دینے والے افراد کا شکریہ ادا کیا۔ واضح رہے نظریہ¿ پاکستان ٹرسٹ کے بلوچستان ریلیف فنڈ میں 23 لاکھ روپے کے نقد عطیات جبکہ 27 لاکھ روپے مالیت کی غذائی اجناس جمع ہوئیں۔ زلزلہ متاثرین کیلئے بھجوائے گئے 50 لاکھ روپے مالیت کے سامان میں چاول، آٹا، دالیں، سفید چنے، نئے کمبل اور روزمرہ استعمال کی دیگر اشیا شامل ہیں۔