بلدیاتی انتخابات جمہوریت کی جانب پہلا قدم ہے ۔ لاہور ہائیکورٹ

25 اکتوبر 2013

لاہور (وقائع نگار خصوصی)  لاہور ہائیکورٹ  نے قرار دیا ہے کہ بلدیاتی انتخابات جمہوریت کی جانب پہلا قدم ہے۔ ہم آزاد ملک کے باشندے ہیں اور ہمیں  اپنے ملکی قوانین کو  ہی مدنظر رکھنا ہے۔ حکومتی فیصلے بھی اسی بنیاد پر ہونے چاہئیں۔  عدالت نے یہ ریمارکس  غیر جماعتی بلدیاتی  انتخابات  کیخلاف  کیس کی سماعت  میں دئیے۔   عدالت نے سماعت آج 25  اکتوبر تک ملتوی کرتے ہوئے مزید دلائل  طلب کر لئے۔  لائرز فائونڈیشن  کے وکیل اے کے ڈوگر  نے دلائل  میں کہا کہ غیر جماعتی بلدیاتی  انتخابات  کرانا آئین پاکستان کی روح کے خلاف ہے۔ پاکستان  میں  کثیر الجماعتی  سیاسی نظام ہے اگر  بلدیاتی  انتخابات  غیر جماعتی  بنیادوں پر کروائے گئے سیاسی نظام  کو بہت نقصان ہو گا۔  تحریک انصاف  کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ ہمارے ملک میں انگریزوں  کے قوانین سے استفادہ  کیا جاتا ہے آئین کے تحت  عدالتوں  کو  عدالتی نظرثانی  کا اختیار حاصل ہے۔  غیر جماعتی  انتخابات  سے سیاسی جماعتوں کی بنیادیں  کمزور ہوں گی جو ملکی  مفاد  کے خلاف ہے۔  جماعتی بنیادوں پر بلدیاتی  انتخابات کرانے کا حکم دیا جائے۔