تحفظ پاکستان آرڈیننس کو اسلام آباد ہائیکورٹ میں چیلنج کر دیا گیا

25 اکتوبر 2013

اسلام آباد (آئی این پی) سابق ڈی آئی جی سلیم اللہ نے پروٹیکشن آف پاکستان آرڈیننس کو اسلام آباد ہائیکورٹ میں چیلنج کر دیا، درخواست میں صدارتی آرڈیننس کے اجراء پر صدر پاکستان کو فریق بنایا گیا اور آرڈیننس کے ذریعے ہائی کورٹ کے بعض اختیارات ختم کر دیئے گئے۔ درخواست گزار نے سماعت کے لئے لارجربینچ تشکیل دینے کی درخواست بھی کر دی۔ اسلام آباد ہائیکورٹ کے جج جسٹس ریاض احمد خان نے درخواست پر ابتدائی سماعت کی۔ درخواست گزار نے بتایا کہ نئے جاری کردہ آرڈی نینس کے تحت ہائیکورٹ کے بعض اختیارات ختم کردیئے گئے ہیں۔ اپنی شناخت ثابت نہ کرنیوالے کی ضمانت بھی نہیں ہوسکے گی جبکہ کسی کو حبس بے جا میں رکھنے پر بھی ہائیکورٹ کو پوچھنے کا اختیار نہیں ہوگا۔ سماعت کے بعد اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس ریاض احمد نے درخواست پر معاملہ لارجر بینچ کیلئے چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ کو بھجوا دیا۔