عوام کی امید…

25 اکتوبر 2013

مکرمی! میں آپکے موقر جریدے کی وساطت سے ارباب اقتدار تک مظلوم عوام کی آ واز پہنچانا چاہتی ہوں کہ عوام نے آپکو اس امید پر منتخب کیا تھا کہ آپ انہیں بنیادی ضروریات فراہم کرینگے اور ماضی کی مشکلات کا ازالہ کرینگے۔ لیکن آپ نے تو عوام کا رہا سہا خون بھی نچوڑ لیا ہے اور پھر آپکا یہ بیان کہ اس مہنگائی کا اثر عوام پر نہیں پڑیگا۔ اگر اس مہنگائی کی چکی میں عوام نہیں پسیں گے تو اور کون پسے گایہ آپ ہی بتا دیں۔ (سعدیہ فضل حسین فرید ٹائون ساہیوال)