قتل کے ملزم کو چھڑانے کیلئے ساتھیوں کا ہسپتال پر دھاوا، فائرنگ سے 2 پولیس اہلکار زخمی

25 مارچ 2014

لاہور (نامہ نگار) منشی ہسپتال میں زیرعلاج قتل کے مقدمہ میں ملوث قیدی کو چھڑانے کیلئے اسکے مسلح ساتھیوں نے دھاوا بول دیا اور فائرنگ کرکے دو پولیس اہلکاروں کو زخمی کر دیا۔ بتایا جاتا ہے کہ کیمپ جیل میں قتل کے مقدمہ میں ملوث قیدی زمان کو شوگر کا مریض ہونے پر چیک اپ کیلئے منشی ہسپتال لایا گیا جہاں اُسے چھڑانے کیلئے اسکے پانچ مسلح ساتھیوں نے دھاوا بول دیا اور اسکی حفاظت پر مامور اہلکاروں کی آنکھوں میں مرچیں ڈال دیں مگر اہلکاروں نے زمان کو دبوچ لیا۔ اس کے ساتھی اُسے پولیس گرفت سے چھڑانے کی کوشش کرتے رہے مگر وہ کامیاب نہ ہوئے جس پر حملہ آوروں نے فائرنگ کرکے دو اہلکاروں عظیم احمد چاند اور عارف شاہ کو زخمی کر دیا اور لوگ اکٹھے ہونے پر حملہ آور زمان کو چھوڑ کر ہوائی فائرنگ کرتے ہوئے فرار ہو گئے۔ فائرنگ سے ہسپتال میں شدید خوف و ہراس پھیل گیا۔