3 خو دکشیاں: گوجرانوالہ میں پسند کی شادی نہ ہونے پر نوجوان نے زندگی ختم کر لی

25 مارچ 2014

گوجرانوالہ + ملکہ ہانس + قبولہ (نمائندہ خصوصی + نامہ نگاران) گوجرانوالہ، ملکہ ہانس اور قبولہ میں 3 افراد نے زندگی ختم کر لی۔ تفصیلات کے مطابق گوجرانوالہ میں پسند کی شادی نہ ہونے پر نوجوان پھندے سے جھول گیا عثمان کالونی کا بیس سالہ اختر اسلم اپنی پسند کی شادی کرنا چاہتا تھا، اسی وجہ سے اکثراس کاگھر میں جھگڑا رہتا تھا۔ گزشتہ روزبھی اسی وجہ سے اس کی گھر میں تلخ کلامی ہوئی جس سے دلبرداشتہ ہوکروہ کمرے میں بند ہوگیا اوراس نے گلے میں پھندا ڈال کر خودکشی کرلی۔ پولیس نے نعش کوضروری کارروائی کے بعد ورثاکے حوالے کر دیا ہے۔  ادھر ملکہ  ہانس میں غربت کے ہاتھوں مجبور پانچ بچیوں کے بوڑھے باپ نے پھندا لے کر، قبولہ میں محبت میں ناکامی  پر نوجوان نے  گولی مار کر زندگی ختم کرلی۔ دکاندار مقبول کی پانچ بیٹیاں تھیں جن کی شادیوں کی فکر اور غربت سے دل برداشتہ ہوکر گذشتہ رات تین بجے کے قریب گھر کے درخت سے گلے میں پھندا ڈال کر زندگی ختم کرلی۔ قبولہ کے مطابق نواحی گائوں 11/EBجوگی ہانس کا ناصر اور پرانا تھانہ کی صوبیہ بی بی دونوں ایک دوسرے کو پسند کرتے تھے اور شادی کرنا چاہتے تھے تاہم صوبیہ بی بی کے گھر والے اس پر رضامند نہ ہوئے۔ عینی شاہدین کے مطابق ناصر نے سرور ڈھڈی جس کے گھر صوبیہ بی بی موجود تھی کے گھر کے سامنے خود کو 30 بور پسٹل سے گولی مار کر اپنی زندگی ختم کر ڈالی۔