حراستی مراکز کی تفصیلات طلب‘ بنیادی حقوق کی خلاف ورزی پر آنکھیں بند نہیں کر سکتے: سپریم کورٹ

25 مارچ 2014
حراستی مراکز کی تفصیلات طلب‘ بنیادی حقوق کی خلاف ورزی پر آنکھیں بند نہیں کر سکتے: سپریم کورٹ

اسلام آباد ( وقائع نگار  ) سپریم کورٹ نے فضل ربی لاپتہ کیس میں وفاقی حکومت سے ملک بھر میں قائم تمام حراستی مراکز اور ان میں زیر حراست افراد کی تفصیلات طلب کر لی ہیں، اٹارنی جنرل اور سیکرٹری داخلہ کے پی کے کو نوٹس جاری کر دیئے ہیں۔ جسٹس ناصر الملک کی سربراہی میں تین رکنی بنچ نے پیر کے روز مقدمے کی سماعت کی۔ جسٹس ناصرالمک نے کہا کہ لاپتہ افراد کا معاملہ انتہائی اہمیت کا حامل ہے۔ شہریوں کے بنیادی حقوق کی خلاف ورزی پر آنکھیں بند نہیں کر سکتے۔ وفاقی حکومت کی جانب سے شاہ خاور نے پیش ہونا تھا مگر لاہور ہائی کورٹ میں ایڈیشنل ججز مقرر ہونے اور حلف لینے کی وجہ سے وہ پیش نہیں ہو سکے ہیں جس پر عدالت نے سماعت 7 اپریل تک ملتوی کر دی۔