اسلام آباد کی ایک عدالت نے انجم عقیل خان کوچودہ روزہ جوڈیشل ریمانڈ پر اڈیالہ جیل بھجوادیا

25 جولائی 2011 (10:13)
جسمانی ریمانڈ مکمل ہونے پرایف آئی اے نے انجم عقیل خان کو اسلام آباد میں سینئر سول جج کی عدالت میں پیش کیا۔ اس موقع پر نیشنل پولیس فاؤنڈیشن سے حاصل ہونے والے ریکارڈ اور ان کے طبی معائنہ کی رپورٹ پیش کی گئی۔ رپورٹ کے مطابق انجم عقیل کو عارضہ قلب لاحق ہے۔ وکیل صفائی نے طبی وجوہات کی بنا پر ملزم کو اسپتال منتقل کرنے اور مقدمہ کے شکایت کنندہ سے راضی نامہ کی بنیاد پر مقدمہ خارج کرنے کی درخواست کی ۔ ایف آئی اے حکام نے موقف اختیار کیا کہ ملزم کا طبی معائنہ کرنے والے ڈاکٹرز نے انہیں اسپتال منتقل کرنے کا نہیں کہا۔ ۔ عدالت نے فریقین کے وکلاء کے دلائل سننے کے بعدملزم کو جیل بھجوانے کے احکامات جاری کر دیے۔ دوسری طرف راول پنڈی کے اسپیشل جج سنٹرل نے چھ ارب روپے کے اراضی اسکینڈل میں انجم عقیل کی عبوری ضمانت میں دو اگست تک توسیع کر دی۔