سپریم کورٹ نے چئیرمین نیب کیس کی تقرری میں مہلت کے لیے دائرحکومتی درخواست خارج کردی ۔

25 جولائی 2011 (03:26)
جسٹس انورظہیرجمالی اورجسٹس آصف سعید کھوسہ پر مشتمل دو رکنی بنچ نے وفاق کی جانب سے بیس جولائی کوسپریم کورٹ میں دائرکی گئی اس درخواست کی سماعت کی جس میں عدالت سے استدعا کی گئی تھی کہ چئیرمین نیب اور پراسیکیوٹرجنرل کی تقرریوں کے لیے حکومت کی نظرثانی کی اپیل سپریم کورٹ میں زیرسماعت ہے اس لیے ان دونوں عہدوں کو پرکرنے کے لیے دی گئی ایک ماہ کی مہلت بڑھائی جائے۔ عدالت نے حکومتی درخواست کوغیرسنجیدہ رویہ قرار دیتے ہوئے خارج کردیا۔ عدالت نے فیصلے میں لکھا ہے کہ اکیس جون کا فیصلہ مکمل طورپرمؤثرہے عدالت کے باہرمیڈیا سے گفتگو میں درخواست گزارحبیب وہاب الخیری کا کہنا تھا کہ حکومت کی طرف سے اکیس جولائی تک چئیرمین نیب اورپراسیکیوٹرجنرل کی تعیناتی نہ کرنے سے سپریم کورٹ کے اکیس جون کے فیصلے کی روشنی میں نیب کا ادارہ ختم ہوگیا ہے۔ انہوں نے کہا اب نینب کے بیان کے لیے نئی قانون سازی کرنا پڑے گی۔