این آئی سی ایل سکینڈل: ایف آئی اے کی ٹیم نے تحقیقاتی رپورٹ مکمل کرلی

25 اگست 2011
لاہور (مانیٹرنگ نیوز/ وقت نیوز/ نمائندہ خصوصی) ایف آئی اے کے ایڈیشنل ڈی جی ظفر قریشی کی سربراہی میں تحقیقاتی ٹیم نے این آئی سی ایل کی انکوائری رپورٹ مکمل کرلی ہے جسے جلد سپریم کورٹ میں جمع کروا دیا جائیگا۔ وقت نیوز کے مطابق تحقیقاتی ٹیم کو معلوم ہوا ہے کہ 32کروڑ روپے میں سے 16کروڑ روپے مونس الٰہی کی بیگم تحریم الٰہی کے (لبرٹی چوک میں ابک بنک اکاﺅنٹ) 5کروڑ روپے الطہور کمپنی کے مالک عمر کے اکاﺅنٹ میں جمع کروائے گئے جبکہ 11کروڑ روپے برطانوی بنکوں میں مختلف طریقوں سے بھجوائے گئے۔ دوسری جانب آئی جی پنجاب نے ظفر قریشی کو دفتر میں داخلے سے روکنے والے اسسٹنٹ ڈائریکٹر سکیورٹی خواجہ حماد کے مقدمہ کی تفتیش ایس ایس پی انویسٹی گیشن عبدالرزاق چیمہ کے سپرد کر دی ہے۔ واضح رہے کہ سپریم کورٹ کے حکم سے ایف آئی اے اسلام آباد کے ڈائریکٹر انعام غنی کی درخواست پر لاہور تھانہ سول لائن میں خواجہ حماد کیخلاف جھوٹ بولنے، کارسرکار میں مداخلت اور ٹیلی فون پر غلط اطلاع دینے کے جرم کی دفعات کے تحت مقدمہ درج کیا گیا تھا اور پہلے اس مقدمہ کی تفتیش انچارج انویسٹی گیشن سول لائن کے سپرد تھیں۔
ایف آئی اے/ رپورٹ