دہشت گردوں کا کوئی چہرہ‘ مسلک نہیں ہوتا: فضل الرحمن خلیل

24 نومبر 2017

اسلام آباد( وقائع نگار خصوصی) سربراہ انصار الامہ پاکستان مولانا فضل الرحمن خلیل نے اپنے اخباری بیان میں کہا کہ دہشت گردوں کا کوئی چہرہ اور مسلک نہیں ہوتا۔گذشتہ دس سالوں میں وطن عزیز پاکستان کا کوئی ایسا طبقہ نہیں ہے جو دہشتگردی سے متاثر نہ ہوا ہو۔پاکستان کے ریاستی ادارے اس ناسور کے خاتمے کے لئے مصروف عمل ہیں ۔چند روز قبل افواج پاکستان کے جانبار میجر اسحاق نے اپنی جان کا نذرانہ پیش کرتے ہوئے دفاع وطن کے نظریے کوجلا بخشی ہے۔ان کی شہادت ہمیں سبق دیتی ہے کہ ملک دشمن عناصرکے خاتمے میں ہی بقائے وطن کا راز مضمر ہے۔وہ دن دور نہیں جب دہشت گردی کے فتنے کو مکمل طور پر کچل دیا جائے گا اور وطن عزیز مشرق سے لے مغرب تک،شمال سے لے کر جنوب تک امن کا گہوارا ہوگا ۔ انکا مزید کہنا تھا کہ ملک دشمن قوتوں کو یہ جان لینا چاہئے کہ پاکستان کا دفاع مضبوط ہاتھوں میں ہے اور ہر قسم کی سازشوں کا مقابلہ کرنے کی بھرپور اہلیت رکھتا ہے۔