ریل کا سفر محفوظ بنانے کیلئے اقدامات کئے جا رہے ہیں: خواجہ سعد رفیق

24 نومبر 2017

اسلام آباد(خبر نگار)وزیر ریلویز خواجہ سعد رفیق نے کہا ہے کہ پاکستان ریلوے قوم کی وحدت ، یکجہتی اور اتحاد کی ایک علامت ہے ، اس ادارے کی بحالی اور ترقی قوم کو امید اور ایک خوشحال پاکستان کا راستہ دکھاتی ہے۔ پاکستان ریلوے کی بہتری کے لیے اب ہمیں دن رات ایک کرنا ہے اور اگر مجھے ترقیاتی منصوبوں کی جلد اور معیاری تکمیل کے لیے چاروں صوبوں کا خود بھی دورہ کرناپڑا تو ضرور کروں گا۔وزارت ریلویز کے مطابق ان خیالات کا اظہار انہوں نے سبی ہرنائی سیکشن کی بحالی ، کوہاٹ پنڈی ریل کے آغاز اور ملک بھر میں ریلوے اسٹیشنوں کی تعمیر نو کے حوالے سے مختلف اجلاسوں کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ ریل کے سفر کو محفوظ بنانے کے لیے اقدامات کئے جارہے ہیں اور اس سلسلے میں مختلف قومی اداروں کے تعاون کے مشکور ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان ریلوے کے افسران اپنے کام کی رفتار کو دوگنا کردیں تاکہ زیادہ سے زیادہ ترقیاتی منصوبوں کو پایہ تکمیل تک پہنچایاجاسکے۔ دریں اثناء چائنہ ریلوے کارپوریشن کے ماہرین کی ٹیم نے ایم ایل ون کی اپ گریڈیشن کے حوالے سے قائم مقام سی ای او ہمایوں رشید اور سی پیک ٹیم لیڈر اشفاق خٹک سے ملاقات کی۔ اپ گریڈیشن کے بعد اسی ٹریک سے 80 سے 90 ملین مسافر سفر کریں گے اور 20سے 25 ملین کارگو کی ترسیل بھی ممکن ہوسکے گی۔اس تخمینے کی توثیق ایشیائی ترقیاتی بنک اور ورلڈ بنک جیسے بین الاقوامی مالیاتی اداروں نے بھی کی ہے ابھی اس تخمینے میں چائنہ اور دوسرے ممالک سے آنے والے کارگو کوشامل نہیں کیاگیاجس کے بعد یہ کئی گنا بڑھ سکتاہے۔ ایم ایل ون آنے والے وقت میں ملک کی ٹرانسپورٹ اور اکانومی کی شہ رگ ثابت ہوگی اور لوگوں کے لیے مزید معاشی راستے کھلیں گے۔