تجاوزات کے نام پر کروڑوں روپے کمائے جارہے ہیں‘ عوام کا پیدل چلنا بھی محال ہے

24 نومبر 2017

راولپنڈی (اپنے سٹاف رپورٹر سے) پاکستان تحریک انصاف کے رکن پنجاب اسمبلی اعجاز خان جازی نے کہا ہے کہ تجاوزات کے نام پر شہر میں ہر مہینے کروڑوں روپے کی منتھلیاں لی جا رہی ہیں شہر میں عوام کا پیدل چلنا بھی محال ہوگیا ہے کسی چوک چوراہے میں وارڈن اپنی ذمہ داریاں ادا کرنے سے عاری ہیں عام لوگ پھنسی ٹریفک چلانے کیلئے تگ و دو میں لگے رہتے ہیں تھانے دکانیں بن چکی ہیں پولیس کی ملی بھگت سے لوگوں کی جائیدادوں پر قبضے کرائے جا رہے ہیں ہائیکور ٹ راولپنڈی بنچ نے تجاوزات کے خاتمے کیلئے راولپنڈی کی انتظامیہ ، پولیس ، ٹی ایم اے سمیت تمام اداروں کی کارکردگی کا پہلے ہی پول کھول رکھا ہے بیروزگاری سے سفید پوش طبقہ زیرو ہو کر رہ گیا ہے مہنگائی کا یہ عالم ہے کہ ہزار کے نوٹ کی طاقت پرانے50 روپے کی رہ گئی ہے انہوں نے ان خیالات کا اظہارجمعرات کو نوائے وقت سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ایم پی اے اعجاز خان جازی نے کہا کہ ہمارے حکمرانوں اور با اثر طبقات نے ملکی دولت لوٹ کر بیرونی بینک بھر دئے ہیں جبکہ یہاں صرف بھوک اور افلاس باقی بچے ہیں جن سے عوام دوچار ہیں سرکاری ہسپتالوں میں غریب آدمی کے30/30 ہزار کے ٹیسٹ کروا دئے جاتے ہیں سارے ڈاکٹر اور ہسپتال پرائیویٹ لیبارٹریوں سے ملے ہوئے ہیں یہی حالات آج تقاضہ کر رہے ہیں کہ چیئرمین عمران خان کے مطالبے پر فوری عمل کرتے ہوئے قبل ازوقت عام انتخابات کروائے جائیں تاکہ ملک اور عوام سنبھل سکیں اس وقت صرف عمران خان واحد قیادت ہیں جو ملکی مسائل کے حل کا ادراک رکھتے ہیں پی ٹی آئی کے منتخب ممران کی پارلیمنٹ اور صوبائی اسمبلیوں میں جو کارکردگی رہی ہے اس میں ہم نے صرف ملک کے چوروں اور لٹیروں کی نشاندہی کرکے عوام میں شعور بڑہا دیا ہے اس لئے دیگر جماعتیں الیکشن قبل ا ز وقت کرانے کے مطالبے کی راہ میں روڑے اٹکا رہی ہیں ان کی کوشش ہے کہ ملک میں سازگار ماحول کی بجائے افرا تفری پیدا ہو کیونکہ ان سیاستدانوں کا تو اب کچھ بھی پاکستان میں نہیں پیسہ ، کاروبار اور بچے پہلے ہی باہر بیٹھے ہیں ان کی ملک سے عدم دلچسپی کا یہ عالم ہوگیا ہے کہ یہ تو اپنے بال تک باہر کٹونے جاتے ہیں اور اپنے کپڑے بھی وہیں سے بنواتے ہیں راولپنڈی میں میرے حلقے کے ساتھ عرصے سے امتیازی سلوک روا رکھا جا رہا ہے میں اپنے حلقے کے عوام کی جرات اور ملک کیلئے جذبہ ایثار کو خراج تحسین پیش کرتا ہوں کہ ملک میں تبدیلی کیلئے عوام نے اتنی قربانی دی اور سب کچھ برداشت کیا انہوں نے کہا کہ آئندہ عام انتخابات میں ن لیگ کا نہ صرف پوری پنڈی سے بلکہ پورے ملک سے سیاسی صفایا ہوجائے گایہ نا اہل حکومت اور اس کے بیوقوف حکمران فیض آباد چوک میں علماء کے دھرنے سے بھی افہام و تفہیم کا راستہ اختیار نہ کرسکے یہ کونسی بات تھی کہ حکومت اپنا ایک وزیر مستعفی نہیں کر سکتی وزیر کے استعفے سے کونسی قیامت ٹوٹ پڑنی تھی اس سے ثابت ہوتا ہے کہ ہمارے حکمران خود دھرنے سے خوش ہیں۔