اترپردیش: سر ڈھانپنے پر 3 علما پر حملہ، چلتی ٹرین سے پھینک دیا

24 نومبر 2017

نئی دہلی (سپیشل رپورٹ +انٹرنیشنل ڈیسک ) بھارتی ریاست اترپردیش میں 7 افراد نے 3 مسلم علما کو تیز دھار آلہ سے ٹرین میں حملے کا نشانہ بنا ڈالا اور باہر پھینک دیا۔ انڈیا ٹوڈے کی رپورٹ کے مطابق تین علما پر 7 افراد نے حملہ کیا۔ رپورٹ میں کہا گیا کہ علما کی حملہ آوروں سے سر ڈھانپنے کے معاملے پر بحث ہوئی جس کے بعد انہوں نے علما پر لوہے کی سلاخوں اور لاٹھیوں سے حملہ کیا اور ٹرین سے اتر گئے۔ حملے کا نشانہ بننے والے مولوی گلزار، اسرار اور ابرار کو ہسپتال منتقل کردیا گیا۔ بگھپت کے سپرنٹنڈنٹ پولیس جے پرکاش سنگھ کا کہنا تھا کہ نئی دہلی سے گزشتہ رات مسافر ٹرین میں سوار ہونے والے تینوں افراد بگھپت میں اپنے گاﺅں جارہے تھے جس دوران ان کی چند نوجوانوں سے بحث ہوئی اور لڑکوں نے مبینہ طور پر ان پر تشدد کیا۔ واقعے کا مقدمہ نامعلوم ملزموں کے خلاف درج کرلیا گیا جبکہ مقدمہ ریلوے پولیس کو منتقل کردیا گیا۔
ٹرین سے باہر

a