آئندہ مالی سال میں واسا کے کسی منصوبے کے لئے کوئی رقم مختص نہیں کی گئی

24 جون 2011
لاہور (شعیب الدین سے) پنجاب حکومت نے آئندہ مالی سال میں واسا کے کسی نئے منصوبے کے لئے رقوم مختص نہیں کیں جبکہ جاری ترقیاتی منصوبوں کے لئے بھی مکمل رقوم جاری نہیں کی گئیں۔ واسا کے جاری ترقیاتی منصوبوں میں لاہور میں صاف پانی اور سیوریج کے نظام کو بہتر بنانے کے لئے نومبر 2008ءمیں ایک ارب 6 کروڑ 80 لاکھ روپے کی لاگت کا منصوبہ شروع کیا گیا جس کے لئے اب تک 50 کروڑ 9 لاکھ روپے جاری کئے گئے ہیں جبکہ آئندہ مالی سال میں صرف 5 کروڑ روپے مختص کئے گئے ہیں۔ شادی پورہ سے سلامت پورہ تک سیوریج اور ڈسپوزل سٹیشن کا منصوبہ جنوری 2009ءمیں منظور ہوا جس پر 75 کروڑ 10 لاکھ لاگت آئی تھی۔ اب تک 50 کروڑ روپے خرچ ہو چکے ہیں جبکہ آئندہ مالی سال میں 25 کروڑ 10 لاکھ روپے مختص کئے گئے ہیں۔ سابقہ دور حکومت میں ایک ارب 36 کروڑ 71 لاکھ روپے سے لاہور کی صاف پانی کی لائنیں تبدیل کرنے کا منصوبہ شروع ہوا جس پر اب تک ایک ارب 12 کروڑ 14 لاکھ روپے خرچ ہو چکے ہیں جبکہ آئندہ مالی سال کے لئے 24 کروڑ 57 لاکھ روپے رکھے گئے ہیں۔ رواں مالی سال میں صرف 30 لاکھ خرچ ہوئے‘ آئندہ مالی سال میں 30 کروڑ 34 لاکھ‘ 2012-13ءمیں 38 کروڑ 70 لاکھ روپے رکھے گئے ہیں۔ پنجاب انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیالوجی میں سے گزرنے والے گندے نالے کو ڈھانپنے کا منصوبہ بھی گذشتہ برس شروع ہوا تھا۔ اس پر ایک کروڑ لاگت آ چکی ہے اور 4 کروڑ 30 لاکھ آئندہ مالی سال میں خرچ ہوں گے۔