ایپکا کے زیر اہتمام سرکاری ملازمین کا مطالبات کے حق میں پنجاب اسمبلی کے باہر دھرنا

24 جون 2011
لاہور (سپیشل رپورٹر) آل پاکستان کلرکس ایسوسی ایشن کے زیر اہتمام سرکاری ملازمین نے اپنے مطالبات کے حق میں پنجاب اسمبلی کے سامنے دھرنا دیا‘ ملازمین نے اپنے مطالبات کے حق میں اور حکومت کے خلاف زبردست نعرے بازی کی جبکہ احتجاج کے باعث مال روڈ پر ٹریفک کا نظام درہم برہم رہا‘ سپیکر پنجاب اسمبلی رانا محمد اقبال کی ہدایت پر صوبائی وزرا اور اپوزیشن پر مشتمل کمیٹی کی طرف سے ایسوسی ایشن کے عہدیداروں سے مذاکرات کے بعد دھرنا اور احتجاج ختم کر دیا گیا تاہم ایسوسی ایشن کے عہدیداروں کا کہنا ہے کہ اگر ایک ہفتے میں ہمارے مطالبات تسلیم نہ کئے گئے تو دوبارہ احتجاج پر مجبور ہوں گے۔ تفصیلات کے مطابق آل پاکستان کلرکس ایسوسی ایشن کے زیر اہتمام مختلف صوبائی محکموں کے ملازمین احتجاجی ریلی کی صورت میں پنجاب اسمبلی کے باہر جمع ہو گئے جنہوں نے مال روڈ پر دھرنا دیا۔ مظاہرین تنخواہوں میں اضافے‘ مختلف محکموں کے ملازمین کو مستقل کرنے اور بعض محکموں میں ملازمین کے روکے گئے فنڈز کی بحالی کے نعرے لگاتے رہے‘ اس موقع پر مظاہرین نے پنجاب حکومت کے خلاف بھی زبردست نعرے بازی کی۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے صوبائی صدر حاجی محمد ارشاد چودھری نے کہا کہ حکومت پنجاب سے مطالبہ ہے کہ ہمارے مطالبات کو فی الفور منظور کیا جائے۔ حکومت کے نمائندوں نے ہمیں مطالبات کی منظوری کی یقین دہانی کروائی ہے جس پر ہم پنجاب حکومت کے شکرگزار ہیں لیکن میں بتانا چاہتا ہوں کہ اگر ایک ہفتے میں ہمارے مطالبات کو تسلیم کر کے نوٹیفکیشن جاری نہ کیا گیا تو دوبارہ سڑکوں پر آنے پر مجبور ہو جائیں گے۔