اب بھی مردِ حرّ؟

24 جون 2011
مکرمی! جناب مجید نظامی کے ” مردِ حّر“ جذبات میں آکر کیا فرما گئے ہیں نظامی صاحب کو بھی نواز شریف کا ” سیاسی گرو“ قرار دے ڈالا ہے۔ جس کا نوائے وقت اور نیشن میں تسلی بخش جوا ب دیا گیا ہے لیکن مجید نظامی صاحب کو چاہئے فون پر بھی آصف زرداری سے احتجاج کریں انہیں نواز شریف کا سیاسی گرو کیوں کہا ہے۔اگر چیلے نواز شریف کی سوچ کو زرداری صاحب پاکستان کیلئے خطرہ کہہ رہے ا ور اسی سوچ کو بے نظیر بھٹو کا قاتل تو پھر اس پس منظر میں نظامی صاحب کو نواز شریف کا سیاسی استاد قرار دینا یکسر غلط اور حددرجہ زیادتی ہے۔میرا خیال ہے آصف زرداری کو مردِحر کا خطاب اب زیب نہیں دیتا کیونکہ وہ حریت افکار کا درست انداز میں مظاہرہ نہیں کر رہے۔
(مآبھ۔ سیالکوٹ 0333 8649897)

مردِ اوّل

آصف علی زرداری جیل سے چھوٹے‘ حلف اٹھایا اور وزیر بن گئے‘ اس پر صحافی نے ...