نواز شریف کا علی گیلانی کو فون‘ مقبوضہ کشمیر کی صورتحال پر گفتگو

23 جون 2011
سرینگر (آن لائن) میاں نواز شریف نے بزرگ حریت پسند رہنما سید علی شاہ گیلانی کو ٹیلی فون کرکے ان سے جموں کشمیر کی تازہ ترین صورتحال پر تبادلہ خیال کیا ۔اسکے علاوہ جماعت اسلامی آزاد کشمیر کے امیر مولانا عبد الرشید ترابی نے بھی فون پر گیلانی سے بات چیت کی۔ حریت کانفرنس کے ترجمان ایاز اکبر نے بتایا کہ نواز شریف اور علی گیلانی کے درمیان قریب15منٹ تک گفتگو ہوئی۔ نواز شریف نے حریت چیئرمین کو بتایا کہ ان کی پارٹی ہمیشہ کی طرح کشمیر کاز کی حمایت جاری رکھے گی۔سابق پاکستانی وزیر اعظم نے مسئلہ کشمیر کے حوالے سے گیلانی کے موقف کی سراہتے ہوئے انہیں یقین دلایا کہ پاکستان کشمیر یوں کی ہر سطح پر حمایت جاری رکھے گا۔ گیلانی نے انہیں بتایا کہ یہاں کی انسانی آبادی زبردست مشکلات سے دوچار ہے، ایک چھوٹے سے خطے میں 10لاکھ فوجی تعینات کئے گئے۔ کشمیر میں عملاً مارشل لا نافذ کیا گیا ہے اور یہاں کے شہریوں کے جمہوری حقوق پامال کئے جارہے ہیں۔ گیلانی نے حکومت پاکستان کو مشورہ دیا کہ وہ کشمیریوں کی حمایت جاری رکھے اور کشمیر کے حوالے سے پاکستان کے بنیادی موقف سے انحراف نہ کیا جائے۔ نواز شریف کے ساتھ گفتگو کے دوران گیلانی نے پاکستان کی داخلی صورتحال پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کے تمام سیاستدانوں کو سیاسی نظریات سے بالاتر ہوکر ملک کو بچانے کی تگ ودو کرنی چاہئے ۔