ملک میں گورننس نام کی کوئی چیز نہیں جبکہ مصنوعی جمہوریت نے کشمیر کاز کوناقابل تلافی نقصان پہنچایا۔ نوازشریف

23 جون 2011 (10:01)
آزاد کشمیرکی انتخابی مہم کے دوران راولا کوٹ میں جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے نواز شریف نے کہا کہ آزاد کشمیر کے عوام کو علم ہونا چاہیئے کہ ٹکٹوں کے فیصلے کہاں ہوتے ہیں، گزشتہ الیکشنوں میں کشمیریوں کے مینڈیٹ کو پاؤں تلے روندھا گیا، نوازشریف نے دھاندلی کرنے والوں کو خبردار کیا کہ وہ بازآجائیں، آئندہ الیکشن میں مسلم لیگ نون دھاندلی نہیں ہونے دے گی۔ انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ نون کے آزادکشمیرآنے کے بعدحکومتی ارکان بھی یہاں پہنچنا شروع ہوگئے ہیں۔ جنہوں نے پاکستان کے عوام کو کچھ نہیں دیا وہ آزادکشمیر کے لوگوں کو کیا دیں گے۔ ان کا کہنا تھا کہ ایبٹ آباد کمیشن کے حوالے سے بھی پیپلزپارٹی نے اعتماد میں نہیں لیا، پی این ایس مہران، خروٹ آباد اورایبٹ آباد جیسے واقعات سے ملکی سالمیت کو نقصان پہنچا ہے۔ نوازشریف نے کہا کہ ملک اس وقت اقتصادی بحران کا شکارہے اور ہرطرف کرپشن کا بازارگرم ہے، اسلام آباد میں صبح شام کرپشن کی بولیاں لگتی ہیں جبکہ چن چن کر من پسند اور کرپٹ افراد کوسرکاری اداروں میں بڑےعہدوں پرتعنیات کیا جارہا ہے۔ جس کی وجہ سے قومی خزانے سے پانچ سو ارب روپے کرپشن کی نذر ہوچکے ہیں جبکہ ملک میں گورننس نام کی بھی کوئی چیزنہیں۔