انسداد دہشتگردی کی عدالت نے سرفراز شاہ قتل کیس میں ملزمان کو وکیل کرنے کے لیےمزید ایک روز کی مہلت دے دی ۔

23 جون 2011 (04:29)
کراچی میں انسداد دہشتگردی کی خصوصی عدالت کے جج بشیراحمد کھوسو نے سرفراز شاہ قتل کیس کی سماعت کی۔اس دوران رینجرزاہلکاروں سمیت سات ملزمان کوعدالت میں پیش کیا گیا۔ سماعت کے موقع پرملزم بہاؤالرحمان کی جانب سے وکیل ایم آر سید نے عدالت کو بتایا کہ قانون کے مطابق ملزمان کو وکیل کرنےکے لیے سات روز کی مہلت دی جانی چاہیے۔ جس پر عدالت نے کہا کہ سپریم کورٹ نے مقدمہ کی روزانہ کی بنیاد پر سماعت کی ہدایت کی ہے اس لیے زیادہ مہلت نہیں دی جاسکتی۔ فاضل عدالت نے ملزمان کو وکیل کرنے کے لیے ایک روز کا وقت دیتے ہوئے کہا کہ اس کے بعد مہلت نہیں دی جائے گی۔ سماعت کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئےوکیل ایم آر سید نے کہا کہ وہ ا بھی مقدمے کے حوالے سے کچھ نہیں کہ سکتے۔ ان کا کہنا تھا کہ بہاؤالرحمان نے فائرنگ نہیں کی تاہم وہ جائے وقوعہ پر رینجرز کی ٹیم کی قیادت کررہے تھے۔