گورننگ بورڈ نے خسارے کا بجٹ منظور کر لیا‘ اعداد و شمار ظاہر کرنے سے انکار‘ پی سی بی ملازمین کی تنخواہوں میں 30 فیصد تک اضافہ

23 جون 2011
لاہور (سٹاف رپورٹر) پی سی بی کے گورننگ بورڈ نے 2011-12ءکے خسارے کے بجٹ کی منظوری دی ہے تاہم بورڈ نے بجٹ کے اعدادوشمار ظاہر کرنے سے انکار کر دیا۔ تفصیلات کے مطابق گذشتہ روز ساڑھے سات گھنٹے سے زائد تک جاری رہنے والے گورننگ بورڈ کے اجلاس کی صدارت چیئرمین پی سی بی اعجاز بٹ نے کی جس میں چیف آپریٹنگ آفیسر سبحان احمد، انتخاب عالم سمیت دیگر ممبران نے شرکت کی۔ اجلاس پی سی بی کے نئے چیف فنانشل آفیسر بدر منظور کی تقرری کی بھی منظوری دی گئی۔ اس موقع پر 3 کمیٹیاں بھی تشکیل دی گئیں جس میں انضباطی کمیٹی میجر نعیم اختر گیلانی، گراونڈ کمیٹی انتخاب عالم اور مارکیٹنگ کمیٹی وزیر علی خوجہ کی قیادت میں قائم کرنے کا اعلان کیا گیا۔ گورننگ بورڈ کی منظوری کے بعد سابق چیف سلیکٹر عبدالقادر کو دوبارہ کرکٹ بورڈ میں نئی ذمہ داریاں سونپ دی گئیں اور انہیں اب چیف کوآرڈینیٹر کلب کرکٹ لگا دیا گیا ہے۔ پی سی بی کے بڑھتے ہوئے قانونی معاملات کی نگرانی کیلئے 12 رکنی پینل آف لائرز کی منظوری بھی دی گئی۔جبکہ 11 ریجنل اکیڈمیز کیلئے الگ الگ لوگو کی منظوری بھی دی گئی۔ اجلاس میں سروس رولز پر بھی بحث ہوئی اور ریگولر ملازمین کو گریجوایٹی دینے کا بھی اعلان کیا گیا۔ نئے مالی سال کیلئے ملازمین کی تنخواہوں میں 17 سے 30 فیصد تک اضافے کی منظوری بھی دی گئی۔ اجلاس میں نیشنل کرکٹ اکیڈمی لاہور کی دیواریں مزید بلند کرنے اور سی سی ٹی وی کیمرے لگانے کی بھی منظوری دی اور ریجنل کرکٹ ایسوسی ایشن کے 20 کھلاڑیوں کو سنٹرل کنٹریکٹ دینے کا فیصلہ کیا گیا۔