فساد کی جڑ!

23 جون 2011
مکرمی! کراچی میں رینجر کے ہاتھوں بے گناہ قتل خروٹ آباد کوئٹہ میں پولیس کے ہاتھوں قتل ممتاز صحافی سلیم شہزاد کا قتل یہ تو وہ قتل ہیں جو میڈیا کی نظر میں آ گئے۔ ہری پور میں حوا کی بیٹی کی بے حرمتی جیسے واقعات روزانہ بے شمار ہوتے ہیں۔ جن کی نہ ہی تو کوئی ایف آئی آر درج ہوتی ہے اور نہ ہی کوئی انکوائری کمشن تشکیل دیا جاتا ہے۔ شہر قائد میں آئے روز ٹارگٹ کلنگ بے گناہ شہریوں کا خون بہایا جا رہا ہے۔ تمام فساد کی جڑ تو یہ لوگ بھی ہیں جنہوں نے 98 فیصد پاکستانی عوام کا جینا حرام کر دیا ہے۔یہی فساد کی جڑ ہیں۔
(محمد یوسف جنجوعہ 0300-8644755)