”شہ رگ سے بھی زیادہ قریب“

23 جون 2011
مکرمی! ہم دنیا میں جتنی چاہیں کوشش کر لیں ہیراپھیری، جھوٹ، دھونس، دھاندلی سے مظلوموں کو خودکش بمبار، ڈکیت اور چور بنانے کی لیکن میرا اللہ دلوں کے حالوں سے بخوبی واقف ہے اور اس کی عدالت میں خود اپنی ہی زبان بلکہ جسم کا ہر انگ انگ جرم کا اقرار کرے گا۔ چیچن شہریوں سے سرفراز شاہ اور پھر سلیم شہزاد کے قتل سے لے کے اب تک کے لامحدود گناہ کرنے والے افراد جان لیں کہ ان کی رسی صرف اور صرف اس لئے دراز کی جا رہی ہے کہ مالک انہیں معافی مانگنے کا موقع دے رہا ہے ورنہ جب یہ اس کی پکڑ میں آئیں گے جو شہہ رگ سے بھی قریب ہے تو اس کی پکڑ شدید ترین پکڑ ہے۔ تب نہ ان کا کوئی سہارا ہوگا اور نہ ہی کوئی مددگار!!!
(حافظ زوہیب طیب)

نفس کا امتحان

جنسی طور پر ہراساں کرنے کے خلاف خواتین کی مہم ’می ٹو‘ کا آغاز اکتوبر دو ...