پاکستان نے آئی بی سی ٹی بی کی امداد کیلئے کوالیفائی کرلیا: اسحاق ڈار

23 دسمبر 2014
پاکستان نے آئی بی سی ٹی بی کی امداد کیلئے کوالیفائی کرلیا: اسحاق ڈار

اسلام آباد (عترت جعفری) 15 بلین ڈالر زرمبادلہ کے ذخائر کی حد عبور کرنے کے بعد پاکستان’’انٹرنیشنل بینک فار کنسٹرکشن اینڈ ڈویلمپنٹ‘‘سے امداد کے حصول کیلئے کوالیفائی کرلیا۔ وفاقی وزیرخزانہ سینیٹر اسحاق ڈار نے نوائے وقت سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ہمیں ایک دروازہ کھلوانا تھا وہ کھلوا لیا ہے ہمیں’’آئی بی سی ٹی ڈی‘‘ سے امداد لینے کی کوئی جلدی نہیں ہے۔ واضح رہے کہ عالمی بینک گروپ کا ایک ادارہ  آئی بی سی ڈی ہے جس سے مختلف منصوبہ جات اور امداد کے حصول کیلئے موثر رابطے ہوئے ہیں۔پہلی شرط کے مطابق ملک کے زرمبادلہ کے ذخائر ملک کی 3 ماہ کی درآمدات کیلئے کافی ہونے چاہئے جبکہ دوسری شرط کے مطابق ملک کے ذمہ قرضوں کا بوجھ جی ڈی پی کے تناسب سے مستحکم ہو یا اس میں تنزلی کا رجحان ہو۔ پاکستان کو ان دونوں شرائط کو پوری کر رہا ہے، ملک کے اسوقت زرمبادلہ کے ذخائر 15 بلین ڈالر ہیں جو ملک کے 3 ماہ کی درآمدات کے بل کے ستر فیصد ہے جبکہ جی ڈی پی کے تناسب سے اگرچہ قرضوں کے بوجھ میں کچھ اصناف فروخت ہوا تھا تاہم اب تنزلی کا رحجان سامنے آیا ہے۔ وفاقی وزیر خزانہ نے کہا کہ چند سال قبل آئی بی سی ڈی نے پاکستان کو قرضہ لینے والے ممالک کی فہرست سے نکال دیا تھا۔ پاکستان کیلئے اب ایک نیا دروازنہ کھل گیا ہے مگر امداد کی کوئی جلدی نہیں ہے۔ عمران خان کی طرف سے کے پی کے کو مزید مالی مدد دینے کے حوالے سے ایک سوال کے جواب میں وفاقی وزیز خزانہ نے کہا کہ مسلم لیگ (ن) کی حکومت نے گذشتہ سال صوبوں کو 16 فیصد زائد مالی وسائل این ایف سی کے تحت دئیے تھے اس سال بھی اس میں اضافہ ہوگا جبکہ پی پی پی کے دور میں تین فیصد اضافہ رقوم آنے کے آخری سال منتقل ہوئی تھیں۔ وفاق کے پاس مالی وسائل محدود ہیں۔