اسلام آباد: سول سوسائٹی کے افراد کا مولانا عبدالعزیز، طالبان کیخلاف مظاہرہ، تھانہ آبپارہ کے سامنے دھرنا

23 دسمبر 2014

اسلام آباد (اپنے سٹاف رپورٹر سے) تھانہ آبپارہ کے سامنے سول سوسائٹی کے ارکان نے احتجاجی دھرنا دیا۔ شرکاء لال مسجد کے خطیب مولانا عبدالعزیز کی گرفتاری کا مطالبہ کر رہے تھے۔ پیپلزپارٹی کی خاتون رکن قومی اسمبلی روبینہ خالد، سماجی رہنما ڈاکٹر فرزانہ باری نے بھی احتجاج میں شرکت کی۔ اس موقع پر سول سوسائٹی کے رکن جبران نے تھانے میں درخواست دی کہ مجھے افغانستان سے حزب الاحرار کے رہنما احسان اللہ احسان نے ٹیلی فون کرکے دھمکی دی ہے کہ ہم لوگ مولانا عبدالعزیز کا پیچھا چھوڑ دیں۔ سول سوسائٹی کی جانب سے یہ درخواست ایس ایچ او خالد اعوان اور ڈیوٹی افسر نے وصول کر لی اور کہا کہ وہ اس کا جائزہ لے کر اگلی کارروائی کریں گے اس دوران سول سوسائٹی کے ارکان مسلسل طالبان مخالف نعرہ بازی کرتے رہے۔ سول سوسائٹی کے ارکان تھانے کے سامنے دھرنا دے کر بھی بیٹھ گئے تاہم بعد میں سول سوسائٹی کے ارکان پرامن طور پر منتشر ہو گئے۔