اور اب عبدالرحمن مکی! بھارت چاہتاکےا ہے؟

22 نومبر 2009
مبےن غزنوی ۔۔۔
خبر ہے کہ برصغےر ”امرےکی تھانے دار“ بھارت نے لشکر طےبہ کے دو کمانڈروں عبدالرحمن مکی اور اعظم چےمہ سمےت اےک اور فرد کے خلاف قرارداد پےش کی ہے بھارت کے شواہد پےش کرنے کے باوجود اُن شواہد کے ناکامی ہونے پر چےن نے وےٹو کرادےا خبر مےں ےہ بھی بتاےا گےا قبل ازےں اس درخواست کو وےٹو کرانے کا ارادہ برطانےہ کا بھی تھا لےکن بعد مےں برطانےہ نے ےہ ارادہ ملتوی کردےا اس بات سے پوری دنےا آگاہ ہے کہ لشکرطےبہ مقبوضہ کشمےر کے مسلمانوں کی اپنی آزادی کے لئے قائم اےک تحرےک کا نام ہے جس نے تحرےک آزادی کشمےر کے لئے اےسا لازوال کردار ادا کےا ہے جس کی مثال ملنا بے حد مشکل ہے لےکن ےہ بات پوری دنےا جانتی ہے کہ لشکر طےبہ کا جماعت الدعوة سے کسی بھی طرح کا کوئی تعلق نہےں۔ جماعتہ الدعوة پاکستان مےں رےلےف اور دعوت کا کام کرنے والی فلاحی جماعت ہے جس کی فلاحی سرگرمےوں کو خود اقوام متحدہ نے بھی تعرےفی اسناد دے کر خراج تحسےن پےش کےا ہے لےکن مکار ہندو بنےا ہے کہ بار بار لشکرطےبہ کو دہشت گرد قرار دے کر جماعتہ الدعوة کے قائدےن کو اس سے منسلک کرکے پاکستان اور جماعة الدعوة کو بدنام کر رہا ہے پہلے ممبئی حملوں کا بہانہ گھڑ کر جماعتة الدعوة کے شفےق القلب امےر حافظ محمد سعےد کو پس زندان کرواےا لےکن وہ جب لاہور ہائی کورٹ کے حکم پر رہا ہوئے تو اب عبدالرحمن مکی کو اےسا دہشت گرد بنا کر پےش کےا کہ جےسے واقعی عبدالرحمن مکی کے وجود سے اس پرامن کائنات کے نظام کو خطرہ لاحق ہو۔
بھلا ہو چےن کا جو آج بھی پاکستان سے لازوال دوستی کا حق ادا کر رہا ہے ورنہ بھارتی حکمرانوں کو دن رات نہ جانے کےوں پاکستان کا وجود برداشت نہےں کہ ہر وقت پاکستان کے خلاف منصوبے تشکےل دےتا رہتا ہے اور عملی طور پر بھی وہ پاکستان مےں جارحےت کا ارتکاب کررہا ہے۔
آئی اےس آئی کے سابق سربراہ جنرل (ر) حمےد گل کے صاحبزادے محمد عبداللہ گل جوکہ محسن پاکستان فاو¿نڈےشن کے چیئرمےن بھی ہےں گزشتہ دنوں ایک مقامی ہوٹل مےں وطن عزےز کی موجودہ صورتحال پر بحث ہو رہی تھی محترم عبداللہ گل فرمانے لگے کہ ےہ بات بھارت بھی جانتا ہے کہ دنےا کی کوئی بھی عدالت جماعتہ الدعوة کا لشکرطےبہ سے کوئی تعلق ثابت نہےں کر سکتی لےکن المےہ ےہ ہے کہ جو الزام لگانے کے لئے ابھی بھارت سوچ رہا ہوتا ہے پاکستانی حکمران وہی جرم جماعة الدعوة پر عائد کر دےتے ہےں عبداللہ گل فرمانے لگے کہ جب قومےں اپنے نظرےے سے دور جانے لگتی ہےں تو ان پر ےونہی ذلتےں اترنے لگتی ہےں۔
خانہ بدوش جرنےل جو اب مختلف ممالک کے ہوٹلوں کی خاک چھانتا پھرتا ہے اس بھگوڑے نے ےوٹرن لے کر وطن عزےز کو جس دوراہے پر لاکھڑا کےا ہے ےہ اسی کا نتےجہ ہے کہ آج ہم اپنے مسےحاو¿ں کی پاک دامنی کے ثبوت دےتے پھرتے ہےں وہ تو تھا ہی خانہ بدوش جو آج ےہاں توکل وہاں اس کی تو عادت ہی ےہ تھی لےکن موجودہ حکومت تو جمہوری ہے عوامی احساسات کا مان رکھنے والی ہے۔ حکومت کا فرض بنتا ہے کہ وہ اےک خود مختار اےٹمی طاقت کا ثبوت دےتے ہوئے بھارت کی جانب سے دہشت گرد قرار دئےے گئے افراد کو اپنے ماتھے کا جھومر بنا کر پےش کرے۔ ذکی عبدالرحمن لکھوی حافظ محمد سعےد کے بعد اب عبدالرحمن مکی کو بھارت نے دہشت گرد قرار دےا ہے بھارت سے ےہ سوال کےا جائے کہ اس پراپےگنڈے کی آڑ مےں وہ چاہتا کےا ہے۔؟