حکومت کے پاس الطاف کیخلاف ثبوت ہیں مگر وہ حتمی فیصلہ نہیں کریگی: مصطفیٰ کمال

22 مئی 2016

کراچی (نوائے وقت رپورٹ) پاک سرزمین پارٹی کے سربراہ مصطفیٰ کمال نے کہا ہے کہ کچھ لوگ اس لئے خوفزدہ ہیں کہ ہم سچ بول رہے ہیں سچ بولتا ہوں تو ایم کیو ایم قائد کو برا لگتا ہے یہ الزام نہیں میں سچ بول رہا ہوں قائد ایم کیو ایم 22 سال سے ’’را‘‘ کیلئے کام کر رہے ہیں حکومت کے پاس قائد ایم کیو ایم کے خلاف ثبوت موجود ہیں پارٹی کے پہلے ورکرز کنونشن سے خطاب کرتے انہوں نے کہا کہ حکومت ایم کیو ایم کے خلاف حتمی فیصلہ نہیں کرے گی حکومت کو ایسے لوگوں کی ضرورت ہوتی ہے جنہیں مرضی کے مطابق استعمال کریں حکومت کو اقتدار کو طول دینے کیلئے ایسے لوگوں کی ضرورت ہوتی ہے قائد ایم کیو ایم کے جرائم کی لسٹ حکومت پاکستان کو سوٹ کرتی ہے جس دن مینڈیٹ چھین لیا گیا حکومتوں کا ہاتھ قائد ایم کیو ایم کے سر سے اٹھ جائے گا۔ مصطفیٰ کمال نے کہا کہ ہماری سابق پارٹی کے لوگوں کیلئے اللہ تعالیٰ نے توبہ کا راستہ کھلا رکھا پاک سرزمین پارٹی دشمن کے ساتھ بھی دوستی کی بات کرتی ہے۔ ہمیں کسی کو خوفزدہ کرکے اپنی پارٹی سے نہیں جوڑتا ہم دوسری پارٹی میں ایک انسان کو خوش کر رہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ ہم ہتھیاروں کے بغیر دشمنوں سے لڑ رہے ہیں کراچی‘ حیدر آباد‘ میر پور خاص میں دشمنوں کا قبضہ ہے ’’را‘‘ کی پارٹی کو ہم نے ڈس کنکٹ کرنا ہے۔ انہوں نے کہا جہاں پر ’’را‘‘ آپریٹ کر رہی ہے وہ ہمارا گھر ہے قائد ایم کیو ایم کو صرف نعشیں چاہئیں نوجوانوں کے مسائل حل کرنے کے لئے صنعتیں اور فیکٹریاں لگانے کی ضرورت ہے۔ صوبہ بنانے کی باتیں کرنے والے شہر سے کچرا نہیں اٹھا سکتے۔