اسلام آباد کی مساجد اور مدارس کے حل طلب معاملات کیلئے کمیٹی کی تشکیل

22 فروری 2017

سلام آباد(وقائع نگار خصوصی)وفاقی وزیر مذہبی امور سردار محمد یوسف اور میئر و چیئرمین سی ڈی اے شیخ انصر عزیز کی زیر صدارت اجلاس میں اسلام آباد کی مساجد اور مدارس کے حل طلب معاملات پر غور کر کے سفارشات پیش کرنے کیلئے ایک کمیٹی تشکیل دے دی گئی ۔تفصیلات کے مطابق گذشتہ دن کیپٹل ڈیویلپمنٹ اتھارٹی کے کونسل ہال میں اسلام آباد کی مساجد اور مدارس کے حل طلب معاملات پر غور کیلئے ایک اعلیٰ سطحی اجلاس ہوا جس کی صدارت وفاقی وزیر مذہبی امور سردار محمد یوسف اور میئر و چیئرمین سی ڈی اے شیخ انصر عزیز نے کی۔ اجلاس میں وزیر مملکت پیر محمد امین الحسنات شاہ اور اسلام آباد کے علماءکی بڑی تعداد کے علاوہ وزارتِ مذہبی امور، سی ڈی اے اور محکمہ اوقاف کے افسران نے شرکت کی۔ اجلاس کے آخر میں اتفاقِ رائے سے تمام مسالک کے علما ءپر مشتمل ایک کمیٹی کا قیام عمل میں لایا گیا۔اس نئی کمیٹی کے ارکان میں ڈاکٹر ظفر اقبال جلالی، پیرممتاز نظامی، مولانا ظہور احمد علوی، مفتی عبد السلام، مولانا ابوبکر حنیف، علامہ سجاد نقوی، ڈی جی وزارتِ مذہبی امور نور سلم شاہ، سی ڈی اے کے ڈپٹی میئر اعظم خان اور ممبر پلاننگ شامل ہیں۔ا س سے قبل علماءکرام نے اسلام آباد کی مساجد و مدارس کی حالتِ زار پر تفصیلی بحث کی اور ان کی تعمیر و انتظامی امور کے حوالے سے مشکلات سے آگاہ کیا۔ وفاقی وزیر نے کہا کہ کسی سیکٹر کو ڈیویلپ کرتے وقت مسجد کو اولیت دی جانی چاہیے اورپہلے سے موجود مساجد میں خواتین کے لیے بھی نماز کا انتظام ہونا چاہئے۔وزیر مملکت پیر محمد امین الحسنات شاہ نے کہا کہ مساجد کی تعمیر میں تمام ضابطوں کو پورا کیا جانا چاہیے ۔ انصاف کے تقاضے پورے کرنے سے عزت و تکریم ملتی ہے۔ میئر و چیئرمین سی ڈی اے شیخ انصر عزیز نے بتایا کہ سی ڈی اے کے ہر نئے سب سیکٹر میں ایک پلاٹ مسجد کیلئے مختص ہو گااور مساجد کی الاٹمنٹ مشاورت سے کی جائے گی۔

نفس کا امتحان

جنسی طور پر ہراساں کرنے کے خلاف خواتین کی مہم ’می ٹو‘ کا آغاز اکتوبر دو ...