اخلاق کے ساتھ افکار کی درستگی اور اسلامی تشخص برقرار رکھنے کی ضرورت ہے،ڈاکٹر احمد یوسف

22 فروری 2017

اسلام آباد(اے پی پی) بین الاقوامی اسلامی یونیورسٹی کے صدر ڈاکٹر احمد یوسف الدریویش نے کہا کہ اخلاق کے ساتھ افکار کی درستگی اور اسلامی تشخص برقرار رکھنے کی ضرورت ہے، اسلامی یونیورسٹی میں تعلیم کے ساتھ تربیت اور قدیم و جدید علوم دونوں کو لے کر چل رہے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے منگل کو بین الاقوامی اسلامی یونیورسٹی کے خواتین کیمپس میں ”نوجوان اور پاکستان کا مستقبل“ کے موضوع پر منعقدہ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ سیمینار میں ریکٹر جامعہ ڈاکٹر معصوم یٰسین زئی اور صدر جامعہ ڈاکٹر احمد یوسف الدریویش سمیت جامعہ کے دیگر اعلیٰ عہدیدران، فیکلٹی ممبران اور طالبات کی بڑی تعداد شریک تھی۔ ڈاکٹر احمد یوسف الدریویش نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ موجودہ حکومت نے ہمیشہ بین الاقوامی اسلامی یونیورسٹی اسلام آبادکے ساتھ ہر جہت میں تعاون کیا، چاہے علمی ہو یا مادی اور جامعہ کے مشن اور اغراض و مقاصد کی تکمیل میں بھی جامعہ کے ساتھ شانہ بشانہ کھڑی رہی اور امت مسلمہ عمومًا اور پاکستان کے طلبہ کے لئے خصوصاً اچھے اساتذہ تیا رکرنے میں تعاون کیا۔ انہوں نے کہا کہ کسی بھی قوم میں نوجوان دل کی دھڑکن ہوا کرتے ہیں اور کوئی قوم ترقی کی منازل نوجوان کی طاقت اور عقل و فہم کے بغیر طے نہیں کر سکتی۔ انہوں نے مزید کہا کہ اسلامی یونیورسٹی میں تعلیم کے ساتھ تربیت اور قدیم و جدید علوم دونوں کو لے کر چل رہے ہیں اور اخلاق کے ساتھ افکار کی درستگی اور اسلام تشخص برقرار رکھنے کی کوشش کی جاتی ہے۔