راجستھان: تھانے میں بدمعاشی دکھانے پر پولیس والوں نے بی جے پی کی رکن پارلیمنٹ اور اسکے شوہر کی دھلائی کردی

22 فروری 2017

جے پور(آئی این پی)بھا ر تی ریاست راجستھان میں بھارتیہ جنتا پارٹی کی رکن پارلیمنٹ اور اس کے شوہر کو تھانے میں بدمعاشی اور پولیس افسر کو تھپڑ مارنا مہنگا پڑ گیا، پولیس پر ہاتھ اٹھانے پر اہلکاروں نے دونوں میاں بیوی کی جم کر دھلائی کر دی، بی جے پی کے کئی کارکنوں کو گرفتار کر کے حوالات میں بند کر دیا۔بھارتی میڈیا کے مطابق رام گنج منڈی کے علاقے مہاویر نگر میں واقع ایک سگریٹ فروش کا پولیس نے چالان کر دیا جس پر مودی کی پارٹی کے درجنوں کارکنوں نے تھانے کا گھیرا کر لیا، پولیس نے کئی کارکنوں کو گرفتار کر کے حوالات میں بند کر دیا، اطلاع ملنے پر بھارتیہ جنتا پارٹی کی ممبر پارلیمنٹ کانتا میگھوال اپنے شوہر نریندرمیگھوال کے ہمراہ گرفتار کارکنوں کو چھڑانے کے لئے پولیس سٹیشن پہنچ گئیں۔ نریندر میگھوال تھانے کے اندر ہی پولیس افسروں سے الجھ پڑا اور پھر ڈی ایس پی چونا رام جاٹ کے منہ پر طمانچہ بھی جڑ دیا، جس پر تھانے میں موجود پولیس اہلکاروں نے نریندر کو گھیر لیا اور جم کر لاتوں مکوں اور ڈنڈوں سوٹوں کا نشانہ بنانے لگے، شوہر کی دھلائی دیکھ کر کانتا میگھوال آگے بڑھیں تو مشتعل اور غصے سے بپھرے پولیس والوں نے خاتون ممبر پارلیمنٹ کو بھی اپنے نشانے پر رکھ لیا اور غنڈہ گردی کرنے والے دونوں میاں بیوی اور کارکنوں کی جم کر دھلائی کی۔

EXIT کی تلاش

خدا کو جان دینی ہے۔ جھوٹ لکھنے سے خوف آتا ہے۔ برملا یہ اعتراف کرنے میں لہٰذا ...