فارما ٹریڈر و انڈسٹری کے تحفظات اور شکایات جائز ہیں دورکرینگے:پنجاب حکومت

22 فروری 2017

راولپنڈی( اپنے سٹاف رپورٹرسے ) پنجاب حکومت کی مذاکراتی کمیٹی نے فارما ٹریڈروانڈسٹری کے ڈرگ ایکٹ ترمیمی بل پرتحفظات کو جائز تسلیم کرتے ہوئے یقین دہانی کرائی ہے کہ نئی ترمیم کے ذریعے انہیں دورکیا جائیگا۔پنجاب حکومت کی جانب سے وزیرقانون رانا ثناءاللہ کی سربراہی میں حکومتی مذاکراتی کمیٹی نے فارما ٹریڈوانڈسٹری کی مشترکہ مذاکراتی کمیٹی کیساتھ لاہورمیں مذاکرات کیے۔وزیراعلیٰ پنجاب کے مشیرصحت خواجہ سلمان رفیق ،میاں مجتباع شجاع الرحمٰن وزیر ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن و سائنس ٹیکنالوجی پنجاب اور خواجہ عمران نذیر وزیر پرائمری ہیلتھ پنجاب بھی حکومتی کمیٹی کے رکن ہیں جبکہ فارما ٹریڈ وانڈسٹری کی مشترکہ مذاکراتی کمیٹی سے پاکستان کیمسٹ اینڈ ڈرگسٹ ایسوسی ایشن پنجاب کے چیئرمین زاہد بختاوری پاکستان فارما سوٹیکل اینڈ مینو فیکچررنگ ایسوسی ایشن کے حامد رضا ،ہول سیلرز ایسوسی ایشن کے چوہدری نثار کے علاوہ ڈاکٹر طاہر اعظم، چوہدری عمران رشید اوردیگرنمائندے بھی بات چیت میں شریک ہوئے چیف منسٹرسیکرٹریٹ لاہورمیں ہونیوالے مذاکرات میں حکومتی کمیٹی نے ترمیمی ڈرگ ایکٹ سے متعلق فارما ٹریڈ وانڈسٹری کی مشترکہ مذاکراتی کمیٹی کے مطالبات اورتحفظات کو جائز تسلیم کرتے ہوئے یقین دہانی کرائی کہ مارچ کے پہلے ہفتے میں ہونے والے صوبائی اسمبلی کے اجلاس میں نئی ترمیم لائی جائے گی اس موقع پر رانا ثنا ءاللہ نے چار وزراءاورفارما ٹریڈ و انڈسٹری کے پانچ نمائندوں پر مشتمل نو رکنی اعلیٰ اختیاراتی کمیٹی کی تشکیل دی جو ڈرگ ایکٹ میں نئی ترمیم کے معاملے پر اپنی حتمی سفارشات تیار کر کے وزیر اعلی پنجاب کو پیش کریگی اور فارما ٹریڈ سے زاہد بختاوری پانچ رکنی اعلیٰ اختیاراتی کمیٹی کی نمائندگی کرینگے۔ اجلاس کے بعد میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے پاکستان کیمسٹ اینڈ ڈرگسٹ ایسوسی ایشن پنجاب کے چیئرمین زاہد بختاوری نے کہا کہ آج کے مذاکرات خوشگوار ماحول میں ہوئے اور حکومتی وزراءکا رویہ نہایت مثبت تھا۔انہوں نے بتایا کہ وزرا کی کمیٹی نے بالخصوص فارما ٹریڈ سے وابستہ تاجروں کے مسائل اورشکایات کو جائز قرار دیتے ہوئے ان کو ڈرگ ایکٹ کے نئے ترمیمی بل کے ذریعے کو دور کرنے کے ساتھ تمام متنازع ترامیم کو بھی ختم کرنے کی ذیقین دہانی کروائی ہے۔