یہودی انتہا پسندوں کامسجد اقصیٰ پر حملہ، بے حرمتی کی، نمازیوں کا شدید احتجاج ، اللہ اکبر کے نعرے

22 فروری 2017

مقبوضہ بیت المقدس (اے پی پی) مسجد الاقصیٰ پر انتہا پسند یہودیوں کے حملے کے بعد اطراف کے علاقوں میں سخت کشیدگی پھیل گئی۔ فلسطین انفارمیشن سینٹر کی رپورٹ کے مطابق بیسیوں انتہاپسندوں نے پارلیمنٹ کے سابق رکن موشے فیگلن کی سرکردگی میں مسجد الاقصیٰ پر حملہ کیا۔ صہےونی انتہا پسندوں کا یہ ٹولہ باب المغاربہ کے راستے مسجد الاقصی میں داخل ہوا اور اس مقدس مقام کی بے حرمتی کا ارتکاب کیا۔اس موقع پر مسجد الاقصی میں موجود نمازیوں نے سخت احتجاج کیااور اللہ اکبر کے نعرے لگا کر انتہا پسندوں کے خلاف اپنے غم و غصے کا اظہار کیا۔صہےونی فوج انتہاپسند صہےونیوں کے اس ٹولے کی حفاظت کر رہی تھی۔دوسری جانب اسرائیلی فوجیوں نے فلسطینی نمازیوں اور طلبا کو باب الاسباط کے ذریعے مسجد الاقصی میں داخل ہونے سے روک دیا۔