دشمن عدم استحکام چاہتا ہے، شہداءکے خون کا بدلہ لینے تک چین سے نہیں بیٹھیں گے، شہباز شریف

22 فروری 2017

لاہور (صباح نیوز)وزیر اعلی پنجاب محمد شہباز شریف کی زیر صدارت یہاں صوبائی کابینہ کمیٹی برائے امن و امان کا اجلاس منعقد ہوا جس میں صوبے میں امن عامہ کی مجموعی صورتحال کا جائز ہ لیا گیا-اجلاس میں بعض شہروں میں دہشت گردی کے حالیہ واقعات کی شدید مذمت کی گئی اور شہید ہونے والے پولیس افسروں، جوانوں اور دیگر افراد کے ایصال ثواب کیلئے فاتحہ خوانی کی گئی- اجلاس میں دھماکوں میں شہید ہونے والے پولیس افسروں، جوانوں اور دیگر افراد کی عظیم قربانیوں کو زبردست الفاظ میں خراج عقیدت پیش کیا گیااورشہداءکے لواحقین سے ہمدردی واظہار تعزیت کیا گیا-وزیر اعلی محمد شہباز شریف نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہماری تمام تر ہمدردیاں شہداءکے لواحقین کے ساتھ ہیں اور پوری قوم شہید ہونے والے پولیس افسروں ، جوانوں اور دیگر افراد کی لازوال قربانیوں کو کبھی فراموش نہیں کر سکتی جنہوں نے اپنا آج قوم کے کل پر قربان کیا ہے- انہوںنے کہا کہ اس وقت پاکستان نازک دور سے گزر رہا ہے - دشمن کے مذموم عزائم کو خاک میں ملانے کیلئے اتحاد و اتفاق کی اہمیت پہلے سے کہیں زیادہ بڑھ گئی ہے - انہوں نے کہا کہ عوام کے جان ومال کے تحفظ سے بڑھ کر کوئی ترجیح ہو نہیں سکتی - وزیر اعلی نے ہدایت کی کہ عوام کے جان و مال کے تحفظ کیلئے تمام ضروری اقدامات کئے جائیں اور سماج دشمن عناصر پر کڑی نظر رکھی جائے -دشمن وطن عزیز کو عدم استحکام سے دوچار کرنا چاہتا ہے -انہوں نے کہا کہ اتحاد کی قوت سے امن کے دشمنوں کو شکست دیں گے اور شہداءکے قیمتی خون کا بدلہ لینے تک چین سے نہیں بیٹھیں گے - انہوں نے کہا کہ دہشت گردی کے خلاف جنگ پاکستان کی بقاءکی جنگ ہے اورانشاءاللہ دہشت گردی کی جنگ میں جیت پاکستان کے عوام کی ہو گی-وزیر اعلی نے کہا کہ پاک دھرتی سے دہشت گردی کے ناسور کو جڑسے اکھاڑ پھینکیں گے -اجلاس میں اینٹی گریٹڈکمانڈکنٹرول اینڈ کمیونیکیشن میں تعینات عملے کو تربیت کیلئے بیرون ملک بھجوانے کا فیصلہ کیا گیااور وزیر اعلی نے ہدایت کی کہ بیرون ملک تربیت کے لئے جانے والے عملے کا انتخاب سوفیصد میرٹ پر کیا جائے- اجلاس کے دوران صوبے میں امن عامہ کی صورتحال کے حوالے سے بریفنگ بھی دی گئی-

EXIT کی تلاش

خدا کو جان دینی ہے۔ جھوٹ لکھنے سے خوف آتا ہے۔ برملا یہ اعتراف کرنے میں لہٰذا ...